Kaan - Joke No. 1509

کان - لطیفہ نمبر 1509

دو آدمیوں کے پاس گھوڑے تھے۔ وہ دونوں سفر پر نکلے۔ رات ایک سرائے میں ٹھہرے تو دونوں کو یہ فکر ہوئی کہ گھوڑے نہ بدل جائیں اس لئے ان میں سے ایک نے گھوڑے کی دم کاٹ لی۔ جب صبح ہوئی تو دیکھا کہ دوسرے کی دم بھی کٹی ہوئی ہے۔ وہ بہت پریشان ہوئے اور اگلی رات انہوں نے نشانی کے طور پر اپنے ایک گھوڑے کا کان کاٹ دیا جب صبح ہوئی تو دوسرے کا کان بھی کٹا ہوا تھا۔ آخر ان میں سے ایک نے کہا کہ بلاوجہ ہم اپنے گھوڑے کاٹ رہے ہیں”ایسا کرتے ہیں کہ سفید گھوڑا تم لے لو اور میں کالا گھوڑا لے لوں۔ “

مزید لطیفے

سپاہی شرابی سے

Sipahi sharabi se

پروفیسر

professor

ناراضگی کی خط و کتابت

narazgi ki khat o kitabat

آمنے سامنے

aamne samne

آرڈر،آرڈر۔۔

order, order

سلیم امجد سے

Saleem Amjad se

شرابی کی بیوی

sharabi ki biwi

ہمیشہ یاد

Hamesha Yaad

کروڑ پتی

crorepati

شیدائی

shedai

بیوقوف

bewaqoof

فینسی شو

Fancy Show

Your Thoughts and Comments