Sikh - Joke No. 476

سکھ - لطیفہ نمبر 476

ایک سکھ شاعر نے جوبی اے پاس تھا غالب کے اشعار کی تشریح لکھنا شروع کی جب یہ شعر سامنے آیا موت کا ایک دن معین ہے نیند کیوں رات بھر نہیں آتی تو اس کی تشریح اس طرح کی غالب کہتا ہے کہ ”موت جب بھی آئے گی دن کے وقت ہی آئے گی پھر رات کو نیند کیوں نہیں آتی؟“۔

مزید لطیفے

کون دھوئے گا

kaun dhoyeage

سوئی دھاگہ

Sui dhaga

مہمان

Mehmaan

استانی بچوں سے

ustani bachon se

مولوی صاحب

molvi sahab

چور اور پاگل

chor aur pagal

باپ نے بیٹے سے کہا

Baap ne bete se kaha

ایک صاحب

Aik sahib

کنجوس باپ

Kanjoos baap

زبان اور قواعد

Zuban aur quwaaid

جوتوں کی دوکان

jooton ki dokaan

دادا

Dada

Your Thoughts and Comments