کاشتکاروں کو تھریشننگ کے دوران ہو اکی سمت اور توڑی نکلنے کی سمت ایک ہی طرف رکھنے کی ہدایت

ہفتہ اپریل 13:07

فیصل آباد۔28 اپریل(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 28 اپریل2018ء) کاشتکاروں کو تھریشننگ کے دوران ہو اکی سمت اور توڑی نکلنے کی سمت ایک ہی طرف رکھنے کی ہدایت کی گئی ہے اور کہاگیاہے کہ کاشتکار تھریشر کھیت میں اس طرح کھڑا کریں کہ ہوا کی سمت کے باعث توڑی دانوں پر نہ گرے نیز گالا لگانے والا آدمی بھی تجربہ کار ہونا چاہیے تاکہ گہائی کے بعد کسی پریشانی کا سامنا نہ ہو ۔

جامعہ زرعیہ فیصل آبادکے ماہرین زراعت نے کہاکہ گند م کے گٹھوں میں کوئی سخت چیز،پتھر یالوہے کے ٹکڑے بھی نہیں ہونے چاہئیں کیونکہ یہ تھریشر میں موجود بلیڈوںکو سخت نقصان پہنچانے کا موجب بن سکتے ہیں۔ انہوںنے کہاکہ گہائی کے دورا ن وقتاً فوقتاً تھریشر کو بند کرکے اس کی جالی اور بال بیرنگ کی گریس وغیرہ چیک کرتے رہنا بھی ضروری ہے ۔

(جاری ہے)

انہوںنے کہاکہ گالے کی مقدار اور تھریشننگ کا وقت فصل میں نمی کے حساب سے متعین کریں اور گیلی فصل ہرگز تھریشر میں نہ ڈالیں ۔

انہوںنے کہاکہ تھریشر کو لیول جگہ پر اس طرح کھڑا کیا جائے کہ اس کی شافٹ اور پلی ٹریکٹر کی شافٹ و پلی کے ساتھ ایک لائن میں ہونی چاہیے ۔انہوںنے کہاکہ رات کو تھریشر پر کام کرنے والے آدمیوں کو ڈھیلے کپڑے نہیں پہننا چاہئیں جبکہ صافے یا چادر وغیرہ کے استعمال سے بھی گریز کرنا چاہیے۔

متعلقہ عنوان :