بیج کیلئے محفوظ کئے جانیوالے گندم کے دانوں میں نمی کی مقدار 10 فیصد سے زائد نہیں ہونی چاہیے، زرعی ماہرین

پیر اپریل 12:34

فیصل آباد۔30 اپریل(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 30 اپریل2018ء) بیج کیلئے محفوظ کئے جانیوالے گندم کے دانوں میں نمی کی مقدار کسی بھی صورت 10 فیصد سے زائد نہیں ہونی چاہیے کیونکہ زائد نمی کی صورت میں بیج کو سخت نقصان پہنچنے کا احتمال ہو سکتاہے۔جامعہ زرعیہ فیصل آبادکے ماہرین زراعت نے بتایاکہ چونکہ حالیہ دنوں میں بعض مقامات پر بارشوں کے باعث گند م کی فصل میں نمی کا تناسب کچھ بڑھ گیاتھا مگر اب موسم گرم اور شدید خشک ہونے کے باعث نمی میں کمی واقع ہوئی ہے لیکن پھر بھی کاشتکار موائسچر چیکنگ میٹر کے ذریعے نمی کا تناسب چیک کر لیں اور اگر گند م میں نمی 10فیصد سے زائد ہو تو اسے کچھ وقت کیلئے دھوپ میں پڑ ا رہنے دیں تاکہ دانے میں موجود نمی ختم ہو جائے اور اس کے بعد بیج کیلئے محفوظ کی جانیوالی گندم کو جراثیموں سے پاک صاف ستھری بوریوں میں بھر کر کچھ دن کیلئے سایہ دار اور ہوا دار جگہ پر رکھا جائے تاکہ گندم کی فصل موسمی تغیرات سے اچھی طرح پاک ہو جائے ۔

(جاری ہے)

انہوںنے کہاکہ کاشتکار فصل کو برداشت سے پہلے کنگھی ، کانگیاری اور غیر اقسام کے پودوں سے پاک کرلیں جبکہ گہائی سے پہلے اور بعد میں تھریشر و کمبائنڈ ہارویسٹرکو بھی اچھی طرح صاف کرلیں تاکہ بیج کیلئے محفوظ کئے جانیوالے گندم کے دانوں میں کسی قسم کی آلودگی کااحتمال نہ رہے۔

متعلقہ عنوان :