ْ1960 کے عشرے میں جرمنی کیمیائی ہتھیاروں کا خواہشمند تھا،امریکی خفیہ دستاویزات میں انکشاف

جمعرات مئی 17:44

برلن(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 03 مئی2018ء) جرمن فوج و امریکی خفیہ دستاویزات میں انکشاف ہوا ہے کہ 1960 کے عشرے میں جرمنی بھی کیمیائی ہتھیاروں کا خواہشمند تھا۔۔جرمن اخبار زٴْود ڈوئچے سائٹنگ اور جرمنی نشریاتی اداروں این ڈی آر اور ڈبلیو ڈی آر کے مطابق 1960 کے عشرے میں سابقہ مغربی جرمن ریاست نے کیمیائی ہتھیاروں کے حصول کی کوشش کی تھی، جو ناکام رہی تھی۔

یہ بات وفاقی جرمن فوج اور امریکی حکومت کی ان خفیہ دستاویزات سے پتہ چلی ہے۔

(جاری ہے)

ان دستاویزات کے مطابق سابقہ مغربی جرمنی کی وزارت دفاع نے 1963 میں امریکی حکومت سے درخواست کی تھی کہ اسے کیمیائی ہتھیار مہیا کیے جائیں۔ تب امریکا نے یہ درخواست مسترد کر دی تھی۔ اس دور میں بین الاقوامی معاہدوں کی وجہ سے وفاقی جمہوریہ جرمنی کو کیمیائی ہتھیار تیار کرنے یا استعمال کرنے کی اجازت نہیں تھی۔ جرمن حکومت اور وفاقی فوج نے ہمیشہ اس بات سے انکار کیا ہے کہ جرمنی نے کبھی کیمیائی ہتھیاروں کی ملکیت یا استعمال کا کوئی منصوبہ بنایا تھا۔

متعلقہ عنوان :