وفاقی حکومت کا اپنی مدت مکمل ہونے سے قبل بیورو کریسی میں بڑے پیمانے پر اکھاڑ پچھاڑ کا فیصلہ

وزیراعظم آفس کی ہدایت پر اسٹیبلشمنٹ ڈویژن افسروں کے تقرروتبادلوں سے متعلق حکمت عملی وضع کر رہی ہے‘ذرائع

اتوار مئی 20:30

اسلام آباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 06 مئی2018ء) وفاقی حکومت نے اپنی مدت مکمل ہونے سے قبل بیورو کریسی میں بڑے پیمانے پر اکھاڑ پچھاڑ کا فیصلہ کر لیا ،تمام اہم وزارتوں ، ڈویژنوں ،صوبوں کے آئی جیز اور چیف سیکرٹریوں سمیت اہم عہدوں پر افسروں کی تعیناتی کیلئے فہرستیں مرتب کی جا رہی ہیں ،،وزیراعظم آفس کی ہدایت پر اسٹیبلشمنٹ ڈویژن افسروں کے تقرروتبادلوں سے متعلق حکمت عملی وضع کر رہی ہے ۔

ذرائع کے مطابق رواں ماہ موجودہ حکومت کا آخری مہینہ ہے ،،وزیراعظم آفس کی ہدایت پر اسٹیبلشمنٹ ڈویژن نے اہم عہدوں پر افسروں کی تعیناتیوں کیلئے فہرستیں مرتب کرنا شروع کردی ہیں ۔آئندہ چند روز میں وفاقی بیورو کریسی میں بڑے پیمانے پر اکھاڑ پچھاڑ کیا جائیگا ۔ صوبائی چیف سیکرٹریز اور آئی جیز کو بھی تبدیل کئے جانے کا امکان ہے جبکہ کوشش کی جا رہی ہے کہ گریڈ19اور20کے افسروں کی تقرری کیلئے سینٹرل بورڈ کا اجلاس بھی منعقد کیا جائے تا کہ اپنی مرضی کے بیورو کریٹس کو اگلے گریڈ میں ترقی دی جا سکے ۔

(جاری ہے)

ذرائع کے مطابق نگران حکومت کے بنتے ہی موجودہ حکومت کی طرف سے بیورو کریسی میں کئے گئے تقرروتبادلے منسوخ کردیے جائیں گے اور نگران حکومت اپنی مرضی کے افسران کو وفاق اور صوبوں میں تعینات کرے گی جو عام انتخابات کے انعقاد اور نئی حکومت بننے تک تعینات رہیں گے ۔

متعلقہ عنوان :