بین الاقوامی اسلامی یونیورسٹی، نویں اوپن ہائوس و کیریئر فیئر کا اہتمام ،انجینئرنگ کے طلباء و طالبات کی جانب سے 100 سے زائد پراجیکٹس کی نمائش

بدھ مئی 18:38

اسلام آباد ۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 09 مئی2018ء) بین الاقوامی اسلامی یونیورسٹی کی فیکلٹی آف انجینئرنگ و ٹیکنالوجی کے زیر اہتمام نویں اوپن ہائوس و کیریئر فیئر کا اہتمام جامعہ کے میل اور فی میل کیمپس میں کیا گیا جہاں انجینئرنگ کے طلباء و طالبات نے 100 سے زائد پراجیکٹس کی نمائش کی اور انڈسٹری و انجینئرنگ ماہرین اور جامعہ کے اعلیٰ عہدیداران سے بھرپور پذیرائی حاصل کی۔

بدھ کو منعقدہ اوپن ہائوس کے دوران میل کیمپس اور فیمل کیمپس میں بی ٹیک اور بی ایس کے طلباء و طالبات نے سول، الیکٹریکل اور الیکٹرانکس انجینئرنگ پراجیکٹس کی نمائش کی۔ اوپن ہائوس کا افتتاح پاکستان اٹامک انرجی کمیشن کے چیئرمین محمد نعیم اور ریکٹر جامعہ ڈاکٹر معصوم یٰسین زئی نے کیا۔

(جاری ہے)

اس موقع پرانڈسٹری اور تعلیمی اداروں کے اساتذہ کے علاوہ انجیئزنگ و ٹیکنالوجی کے ماہرین بھی موجود تھے۔

تقریب میں ڈین فیکلٹی آف انجیئزنگ و ٹیکنالوجی ڈاکٹر محمد عامر، فیکلٹی کے شبعہ جات کے سربراہان، ڈاکٹر سعید بادشاہ اور صبا حمید بھی موجود تھیں۔ طلباء و طالبات نے بجلی کے بحران کے خاتمہ، شعبہ طب میں معیاری مشینری جیسے کئی ایک پراجیکٹس کے ذریعے اپنے ٹیلنٹ کا مظاہرہ کیا۔ اوپن ہائوس میں اظہار خیال کرتے ہوئے محمد نعیم نے کہا کہ پاکستانی تعلیمی اداروں اور انڈسٹری کے مابین ربط لازم ہے اور ایسی سرگرمیوں کا انعقاد ضروری ہے۔

اس موقع پر ریکٹر جامعہ و صدر جامعہ نے اس عزم کا اظہار کیا کہ یونیورسٹی اپنے ہونہار طلباء و طالبات کو صلاحیتوں کے اظہار کیلئے بہترین پلیٹ فراہم مہیا کر تی ر ہے گی۔ اختتامی تقریب کے مہمان خصوصی چیئرمین انجینئرنگ کونسل انجینئر جاوید سلیم قریشی تھے جنہوں نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ہونہار طلباء و طالبات پاکستان کا قیمتی سرمایہ ہیں اور اوپن ہائوس نے ثابت کر دیا کہ ملک میں ٹیلنٹ کی کمی نہیں۔