گوئٹے مالا کا سویڈن اور وینیزویلا کے سفیروں کو ملک بدر کرنے کا فیصلہ

ہفتہ مئی 11:20

گوئٹے مالا سٹی۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 12 مئی2018ء) گوئٹے مالا حکومت نے کہا ہے کہ سویڈن اور وینیزویلا کے سفارت کار ہمارے اندرونی معاملات میں مداخلت کر رہے تھے جس کی بنا پر انہیں ملک بدر کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔

(جاری ہے)

گوئٹے مالا کے ذرائع ابلاغ کے مطابق گوئٹے مالا سٹی میں پریس کانفرس کرتے ہوئے وزیر خارجہ ساندرہ ہوویل نے کہا کہ گوئٹے مالا ایک خود مختار ملک ہے جس کے اندرونی معاملات میں بیرونی مداخلت قبول نہیں کی جا سکتی۔

انھوں نے کہا کہ سویڈن اور وینیزویلا کے سفارتخانے ہمارے اندرونی معاملات میں مداخلت کر رہے تھے جس کی بنا پر ان ممالک کے سفیروں کو ملک بدر کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ واضح رہے کہ سویڈن نے گوئٹے مالا میں بد عنوانی کے خاتمے کے لیے اقوام متحدہ کے متعین کردہ ایک کمیشن کو مالی امداد بھی فراہم کی تھی

متعلقہ عنوان :