قومی ٹیم کے فیلڈنگ کوچ آئی پی ایل کا حصہ بننے کیلئے تیار

اسکاٹ لینڈ کے خلاف ٹی20 میچز کے بعد اپنے عہدے سے مستعفی ہو جائیں گے رکسن نے 2010، 2011 اور 2018 کی آئی پی ایل چمپئن چنئی سپر کنگز کے ستھ معاہدے پر دستخط کیے

جمعہ جون 21:59

قومی ٹیم کے فیلڈنگ کوچ آئی پی ایل کا حصہ بننے کیلئے تیار
لاہور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 08 جون2018ء) پاکستانی ٹیم کے موجودہ فیلڈنگ کوچ اسٹیو رکسن نے انڈین پریمیئر لیگ کی ایک فرنچائز کے ساتھ پرکشش معاہدے پر دستخط کر دیے ہیں اور اسکاٹ لینڈ کے خلاف ٹی20 میچز کے بعد وہ اپنے عہدے سے مستعفی ہو جائیں گے۔ذرائع نے بتایا کہ پاکستانی ٹیم کے مستقل سفر کے سبب اسٹیو رکسن اپنی نوکری سے اکتا چکے ہیں اور آئی پی ایل سے معاہدے میں بہت دلچسپی رکھتے تھے کیونکہ وہاں انہیں بہت پرکشش معاوضہ ملنے کے ساتھ مستقل سفر جیسے مسائل بھی درپیش نہیں ہوں گے جس کی بدولت وہ اپنے اہلخانہ کے ساتھ زیادہ وقت گزار سکیں گے ابھی تک اس بات کی تصدیق کو نہیں ہو سکی لیکن ذرائع کے مطابق رکسن نے 2010، 2011 اور 2018 کی آئی پی ایل چمپئن چنئی سپر کنگز کے ستھ معاہدے پر دستخط کیے ہیں۔

(جاری ہے)

یہاں یہ بات بھی قابل ذکر ہے کہ رکسن نے اپنی گزشتہ کسی بھی نوکری میں دو سے ڈھائی سال سے زائد کا عرصہ نہیں گزارا اور وہ پاکستان کے ساتھ بھی ایسا ہی کر رہے ہیں جہاں وہ تقریباً ڈھائی قومی ٹیم کے ساتھ گزارنے کے بعد عہدہ چھوڑ رہے ہیں۔انہیں پاکستانی ٹیم کے موجودہ کوچ مکی آرتھر لے کر آئے تھے جن کی کوچنگ میں پاکستان نے انگلینڈ میں 2 مرتبہ ٹیسٹ سیریز برابر کرنے کے ساتھ ساتھ چیمپیئنز ٹرافی جیتنے کا کارنامہ بھی انجام دیا تھا۔

ذرائع نے بتایا کہ پی سی بی نے اسٹیو رکسن کو تنخواہ میں 10فیصد اضافے کی پیشکش بھی کی لیکن انہوں نے اپنے معاہدے میں توسیع سے انکار کردیا۔فیلڈنگ کوچ کے عہدہ چھوڑنے کی بڑی وجہ مستقل سفر ہے ورنہ اس کے علاوہ انہیں پاکستانی ٹیم سے کوئی شکایت نہیں اور وہ اپنی نوکری سے بہت مطمئن تھے۔