وقت آگیا مسلم ممالک خواتین کے ساتھ برتائو میں تبدیلی لائیں ، محمد صلاح

چاہتا ہوں اسلامی ممالک خصوصاً مشرق وسطیٰ میں خواتین کی اہمیت کو پہچانا جائے ، انہیں اہمیت دی جائے ، سٹار مصری فٹبالر

جمعرات اپریل 21:39

وقت آگیا مسلم ممالک خواتین کے ساتھ برتائو میں تبدیلی لائیں ، محمد صلاح
قاہرہ(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - آن لائن۔ 18 اپریل2019ء) مصر کے فٹ بال اسٹاراور برطانوی فٹ بال کلب لیورپول کے کھلاڑی محمد صلاح کا کہنا ہے کہ اب وقت آگیاہے کہ مسلم ممالک میں خواتین کے ساتھ ہونے والے برتاؤ میں تبدیلی آنی چاہیے۔محمد صلاح جنہیں ’مو صلاح‘ کے نام سے پکارا جاتا ہے نے معروف امریکی جریدے ’ٹائمز’ کو دیے گئے انٹرویو میں کہا کہ وہ چاہتے ہیں کہ اسلامی ممالک اور خصوصی طور پر مشرق وسطیٰ میں خواتین کی اہمیت کو پہچانا جائے اور انہیں اہمیت دی جائے۔

محمد صلاح دنیا کے ان چند اسپورٹس شخصیات میں شامل ہیں جنہیں ’ٹائمز میگزین‘ نے حال ہی میں جاری کی گئی دنیا کے 100 بااثر افراد کی فہرست میں شامل کیا ہے۔ٹائمز میگزین کی اس فہرست میں سیاست، شوبز، لائف اسٹائل، صنعت، ٹیکنالوجی اور اسپورٹس کی اہم شخصیات کو شامل کیا گیا ہے۔

(جاری ہے)

اس فہرست میں جہاں پاکستانی وزیر اعظم عمران خان کا نام شامل کیا گیا ہے، وہیں بھارت کے امیر ترین شخص مکیش امبانی کا نام بھی شامل کیا گیا۔

اسی فہرست میں اسپورٹس کی چند نامور شخصیات کا نام شامل ہے اور محمد صلاح بھی اسی فہرست کا حصہ ہیں۔انہوں نے فہرست میں شامل کیے جانے کے حوالے سے ٹائمز کو دیے گئے انٹرویو میں کہا کہ مشرق وسطیٰ میں خواتین کے ساتھ رکھے جانے والے ناروا سلوک کے باعث ان کے اندر خواتین کے لیے مثبت سوچ نے جنم لیا اور وہ چاہتے ہیں کہ مسلم ممالک میں بھی خواتین کو مردوں جیسے ہی حقوق حاصل ہوں۔

محمد صلاح کے مطابق وہ چاہتے ہیں کہ مشرق وسطیٰ یا مسلم ممالک میں جتنے حقوق مردوں کو حاصل ہیں، ایسے ہی حقوق خواتین کو بھی حاصل ہوں۔ساتھ ہی انہوں نے یہ اعتراف بھی کیا کہ پہلی بار ان میں خواتین کے ساتھ بہتر برتاؤ کے جذبات پیدا ہوئے اور اب وہ چاہتے ہیں کہ خواتین کو بھی سماج میں وہی اہمیت دی جائے جو سماج کے دیگر افراد کو دی جاتی ہے۔