تمام ایئرپورٹس پر پلاسٹک کی لازمی ریپنگ کا حکم نامہ منسوخ

فیصلہ منسوخ مسافروں کے ردعمل کے پیش نظر کیا گیا، مسافر کے سامان کی پلاسٹک ریپنگ ان کی مرضی سے کی جائے۔ سول ایوی ایشن اتھارٹی کا ایئرپورٹس حکام کو خط جاری

sanaullah nagra ثنااللہ ناگرہ پیر جولائی 00:02

تمام ایئرپورٹس پر پلاسٹک کی لازمی ریپنگ کا حکم نامہ منسوخ
اسلام آباد (اردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 21 جولائی2019ء) ملک کے تمام ایئرپورٹس پر پلاسٹک کی لازمی ریپنگ کا حکم نامہ منسوخ کردیا گیا، سول ایوی ایشن اتھارٹی نے تمام ایئرپورٹس کو خط جاری کردیا ہے، مسافر کے سامان کی پلاسٹک ریپنگ ان کی مرضی سے کی جائے، فیصلہ منسوخ مسافروں کے ردعمل کے پیش نظر کیا گیا۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق ملک میں ایئرپورٹس پر مسافروں کے سامان پر پلاسٹک کی لازمی ریپنگ کا حکم نامہ منسوخ کردیا ہے۔

سول ایوی ایشن اتھارٹی نے سامان کی لازمی ریپنگ سے متعلق احکامات کی منسوخی کیلئے خط جاری کردیا ہے۔ خط میں آگاہ کیا گیا کہ کوئی مسافر اپنی مرضی سے پلاسٹک ریپنگ کرانا چاہے تو اسے سہولت فراہم کی جائے گی۔ ماضی میں بھی پلاسٹک ریپنگ کو لازمی قرار دلوانے کی کوششیں ناکام ہو چکی ہیں۔

(جاری ہے)

ذرائع کا کہنا ہے کہ فیصلہ عوامی ردعمل اور ایئرپورٹس پر مسافروں کی مزاحمت کے پیش نظر کیا گیا۔

اس سے قبل تحریک انصاف کے مرکزی رہنماء جہانگیر ترین نے سول ایوی ایشن اتھارٹی کی جانب سے پلاسٹک بیگ کے نوٹیفکیشن کو لازمی قرار دینے پر اپنے ردعمل میں کہا کہ مسافروں کو سامان پلاسٹک میں لپیٹنے پر مجبورکرنا ٹھیک نہیں۔ مسافروں کی مرضی ہے کہ سفری سامان پر پلاسٹک لپٹوائیں یا نہیں۔ جہانگیر ترین نے کہا کہ سول ایوی ایشن کا غیرمنطقی نوٹیفکیشن نظرسے گزرا۔

نوٹی فکیشن جلد سے جلد واپس لیا جائے۔ اس کے برعکس وزیرمملکت برائے موسمیاتی تبدیلی زرتاج گل نے اپنے ٹویٹ میں کہا کہ پلاسٹک میں سامان لپیٹنے کا فیصلہ سعودی حکومت کا ہے۔ پلاسٹک میں سامان لپیٹنے پر سول ایوی ایشن اتھارٹی سے معلومات حاصل کی ہیں۔ زرتاج گل نے کہا کہ پلاسٹک میں سامان لپیٹنے کی شرط روڈ ٹو مکہ پروجیکٹ میں رکھی گئی۔ وزیرمملکت نے کہا کہ سامان پلاسٹک میں لپیٹنے کا مقاصد مسافروں کے سامان کی حفاظت یقینی بنانا ہے۔

واضح رہے سینئر تجزیہ کار شاہد لطیف کے بارے میں انکشاف ہوا ہے کہ ان کی کمپنی نے سول ایوی ایشن اتھارٹی کے ساتھ فضائی مسافروں کے سامان کو پلاسٹک کے بیگز میں لپیٹنے کا ٹھیکہ کیا ہے۔ جس سے روزانہ لاکھوں اور ماہانہ کروڑوں روپے کی بچت ہوگی۔ دوسری جانب وزیر مملکت برائے موسمیاتی تبدیلی زرتاج گل نے کہا ہے کہ پاکستان تحریک انصاف کی حکومت قانون کی حکمرانی اور آئین کی بالادستی پر یقین رکھتی ہے۔

ایک انٹرویومیں وزیر مملکت برائے موسمیاتی تبدیلی زرتاج گل نے کہا کہ بدعنوان عناصر اور لوٹ مار کرنے والوں کا بلا تفریق احتساب کیا جائے گا۔زر تاج گل نے کہا کہ بدعنوانی کے الزامات میں جیلوں میں قید افراد اپنہ صحت کے مسائل پر واویلا کرتے ہوئے دعوی کرتے ہیں کہ ان کا علاج صرف بیرون ملک ممکن ہے۔وزیر مملکت برائے موسمیاتی تبدیلی نے کہا کہ پاکستان تحریک انصاف کی حکومت قانون کی حکمرانی اور آئین کی بالادستی پر یقین رکھتی ہے۔