اینٹی کرپشن سرگودھا کی کارروائی

اسسٹنٹ کمشنر ساجدصفدر ایک کروڑ اکتالیس لاکھ کاسرکاری خزانے کو نقصان دینے کے جرم میں گرفتار

جمعرات اپریل 20:59

دریاخان (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 19 اپریل2018ء) اینٹی کرپشن سرگودھا نے اسسٹنٹ کمشنر ساجدصفدر کو ایک کروڑ اکتالیس لاکھ روپے کاسرکاری خزانے کو نقصان دینے کے جرم میں گرفتار کر لیا تفصیلات کے مطابق سال 2015میں مقامی شوگر ملزکوفروخت کیا گیااے سی دریا خان ساجد صفدر جو اس وقت سب رجسٹرار تعینات تھے جس نے انتقالات کے دوران شوگر ملز کی ویلیو کو کم ظاہر کیااوور انتقالات کی فیسوں کی مد میں سرکاری خزانے کوایک کروڑ اکتالیس لاکھ روپے کا نقصان پہنچایا جس پر اینٹی کرپشن سرگودھا نے انکوائری کے بعد مقدمہ درج کرکے چاررکنی تفتیشی ٹیم ڈپٹی ڈائریکٹر(تفتیش) عروج الحسن ، ڈپٹی ڈائریکٹر گل محمدراں ،اسسٹنٹ ڈائریکٹر(تفتیش)محمدخرم انوار اور سرکل آفیسر ہیڈکوارٹر عصمت اللہ بندیال پر مشتمل تشکیل دی دوران تفتیش ثابت ہوا کہ موجودہ اے سی دریا خان ساجد صفدر نے بطور سب رجسٹرار دریا خان 2015میں مقامی شوگر ملز کو انتقالات کے دوران ایک کروڑ اکتالیس لاکھ کا فائدہ پہنچایا جبکہ جعلی فردات کا بھی استعمال کیا اینٹی کرپشن سرگودھا کی ٹیم نے کاروائی کرتے ہوئے اسسٹنٹ کمشنر ساجد صفدر کو گرفتار کر لیا جبکہ مقدمہ میں نامزد دیگر ملزموں کی گرفتاری کے لئے چھاپے مارے جا رہے ہیں

متعلقہ عنوان :