ْپنجاب فوڈ اتھارٹی کا سال 2018کا فوڈ لائسنس نہ بنوانے والوں کے خلاف سخت کارروائی کا فیصلہ

پہلے سے لائسنس شدہ فوڈ بزنس آپریٹرز کوتجدید لائسنس کی ہدایت، 31اپریل تک کی مہلت

منگل اپریل 21:20

لاہور۔24 اپریل(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 24 اپریل2018ء) پنجاب فوڈ اتھارٹی نے سال 2018کا فوڈ لائسنس نہ بنوانے والوں کے خلاف سخت کارروائی کا فیصلہ کیا ہے اور اس حوالے سے فوڈ لائسنس نہ بنوانے والوں کو حتمی نوٹس جاری کردیا ہے۔ ڈائریکٹر جنرل پنجاب فوڈ اتھارٹی نورالامین مینگل کے آفس سے جاری ہونے والے نوٹس میں لائسنس نہ لینے والوں کو متنبہ کیا گیا ہے اور لائسنس نہ لینے والوں کو 31اپریل کی ڈیڈ لائن جاری کر دی گئی ہے۔

(جاری ہے)

نوٹس میں مزید کہا گیا ہے کہ ڈیڈ لائن ختم ہونے تک تمام فوڈ بزنس آپریٹرز لائسنس کا حصول یقینی بنائیں۔ڈیڈ لائن کے بعد چیکنگ کے دوران لائسنس کی عدم موجودگی پر پنجاب فوڈ اتھارٹی ایکٹ 2011کی سیکشن 32کے تحت سخت کارروائی کی جائے گی اورقانون کے مطابق ایک سال تک قید یا 5لاکھ جرمانہ یا دونوں سزائیں دی جائیں گی۔نوٹس میںپہلے سے لائسنس شدہ فوڈ بزنس آپریٹرز کو لائسنس کی تجدید کروانے کی بھی ہدایت جاری کی گئی ہے۔۔پنجاب فوڈ اتھارٹی فوڈ لائسنس کی فیس الائیڈ بنک کی کسی بھی شاخ میں جمع کروائی جا سکتی ہے۔ یہاں یہ بات قابل ذکر ہے کہ پنجاب فوڈ اتھارٹی کی طرف سے سال 2018میں اب تک 35379 لائسنس جاری کیے جا چکے ہیں ۔

متعلقہ عنوان :