ما ہرین کی آم کے باغبانوں کوفاسفورس ‘پوٹاش‘جپسم کھاد ڈال کر ہلکی آبپاشی کرنے کی ہدایت

ہفتہ اپریل 11:20

قصور۔28 اپریل(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 28 اپریل2018ء)آم کے باغبانوں کو ناغے پرکرنے اور فاسفورس ‘پوٹاش‘جپسم کھاد ڈال کر ہلکی آبپاشی کرنے کی ہدایت کی گئی ہے اور کہاگیاہے کہ آم کے باغات میں نشوونما کے مرحلہ کے دوران پھول آنے اور نئے پتے نکلنے کا آغازہوچکاہے، اسلئے باغبان فاسفورس اور پوٹاش کا تیسراحصہ جبکہ جپسم ڈالنے سمیت عناصرصغیرہ کا سپرے مکمل کرلیں۔

(جاری ہے)

ماہرین زراعت نے کہا کہ باغبان کھادڈالنے کے بعد ہلکی آبپاشی بھی کریں اور کیڑے مکوڑوں کے حملوں کا بھی بغورجائزہ لیاجائے۔انہوں نے کہا کہ جب آم کے پودے پر 40فیصد کے قریب پھول آجائے تو حفاظتی سپرے میں کسی غفلت کا مظاہرہ نہ کیاجائے بٹوروالے پھولوں کو سبزحالت میں خشک ہونے سے پہلے کاٹ کر تلف کردیاجائے اور مکمل پھول آنے پر یوریاکھاد ایک کلو گرام فی پوداڈال دی جائے۔ ماہرین کے مطابق پھول آنے کے مرحلہ پر کاشتکارکھادوں کا استعمال محکمہ زراعت کی مشاورت سے کریں‘باغات میں گہری جڑ والی فصلوں کی کاشت نہ کی جائے۔