پارٹی تبدیل کرنے کانقصان سابق وفاقی وزیر نادر پرویز اور سابق وفاقی وزیر مشاق احمد چیمہ فیملی کی سیا ست ختم ،نہ ادھرکے رہے اور نہ ادھر

2018ء کے عام انتخابات کیلئے تحریک انصاف نے ووٹ فروش چیئر مینوں کے لئے ’’اپنے در وازے‘‘ بند کر لئے‘ ایسے ضمیر فروشوں کو پارٹی ٹکٹ نہ دینے کا اصولی فیصلہ کر لیا گیا

بدھ مئی 19:59

فیصل آباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 23 مئی2018ء) پارٹی تبدیل کرنے کانقصان سابق وفاقی وزیر نادر پرویز اور سابق وفاقی وزیر مشاق احمد چیمہ فیملی کی سیا ست ختم ،نہ ادھرکے رہے اور نہ ادھر کے جبکہ 2018ء کے عام انتخابات کیلئے تحریک انصاف نے ووٹ فروش چیئر مینوں کے لئے ’’اپنے در وازے‘‘ بند کر لئے‘ ایسے ضمیر فروشوں کو پارٹی ٹکٹ نہ دینے کا اصولی فیصلہ کر لیا گیا‘ آن لائن کے مطابق سابق وفاقی وزیر نادر پرویز مسلم لیگ ن کو چھوڑ کر تحریک انصاف میں شامل ہوئے تھے مگر پانچ سے وہ سیاسی منظر نامہ سے غائب ہیں تحریک انصاف کی قیادت نے ایک بار پھر ان کو ٹکٹ دینے سے انکار کردیا ہے اور اس ان کی سیاست مکمل طور پر خاموش ہوگئی ہے ، سابق وفاقی وزیر مشاق احمد چیمہ چور پیپلزپارٹی کو چھوڑ کر مسلم لیگ ق اور پھر تحریک انصاف میں شامل ہوئے تھے ان کے بھائی ممتاز علی چیمہ پر الزام ہے کہ انہوں نے بلدیاتی انتخابات میں مسلم لیگ ن کے امیدوار کی حمائت کی اور اس کو ووٹ فروخت کیا جس پر چیئرمین عمران کی ہدایت پر ایسے ووٹ فروش اور ضمیر فروش کو پارٹی ٹکٹ نہ دینے کا اصولی فیصلہ کر لیا گیا اگر ان میں کوئی بھی پارٹی کو ٹکٹ کے لئے اپلائی کریں گے تو ان کی درخواست فارم پر ’’سوری‘‘ لکھ کر انہیں واپس کر دیا جائے گاتاہم اس صورتحال میں سابق وفاقی وزیر مشاق احمد چیمہ فیملی کی سیا ست ختم ہو گئی ہے یارہے کہ فیصل آباد میں تحریک انصاف کے بلدیاتی انتخابات میں 18کے قریب چیئرمین منتخب ہوئے تھے اور تمام تمام نے اپنے ووٹ مسلم لیگ ن کے امیدوارکو دیئے تھے جس پر پارٹی قیادت نے چیئرمین ممتاز علی چیمہ دیگر چیئرمینوں کو پارٹی سے فارغ کردیا تھا