خشک سالی کی سبب لاکھوں افغان شہریوں کو خطرہ،

115ملین ڈالر امدادکی عالمی اپیل کٴْل 34 صوبوں میں سے دو تہائی علاقہ گزشتہ برس کے آخر سے بارشوں کی شدید کمی سے متاثر ہے،اقوام متحدہ

بدھ مئی 13:59

نیویارک(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 30 مئی2018ء) جنگ زدہ ملک افغانستان میں خشک سالی کے سبب فصلوں کو شدید نقصان پہنچا ہے اور اسی تناظر میں اقوام متحدہ نے خبردار کیا ہے کہ کئی ملین افغان بھوک کے خطرے سے دو چار ہو سکتے ہیں۔

(جاری ہے)

افغانستان کے کٴْل 34 صوبوں میں سے دو تہائی علاقہ گزشتہ برس کے آخر سے بارشوں کی شدید کمی سے متاثر ہے ، اقوام متحدہ نے ان حالات سے متاثرہ افغان خاندانوں کو اشیائے خوراک کی فراہمی کے لیے 115 ملین ڈالرز فراہم کرنے کی اپیل کی ہے۔

غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق اقوام متحدہ کے ادارہ برائے انسانی معاملات اوسی ایچ اے نے بتایا کہ افغانستان کے کٴْل 34 صوبوں میں سے دو تہائی علاقہ گزشتہ برس کے آخر سے بارشوں کی شدید کمی سے متاثر ہے۔ خوراک و زراعت کے محکمے کے مطابق بعض دریا اور پانی کے ذخائر مکمل طور پر خشک ہو چکے ہیں۔ اقوام متحدہ نے ان حالات سے متاثرہ افغان خاندانوں کو اشیائے خوراک کی فراہمی کے لیے 115 ملین ڈالرز فراہم کرنے کی اپیل کی ہے۔