سینیٹرز کے جعلی اکاونٹس بھی نکلنے لگے

سینیٹر عثمان کاکڑ نے دعویٰ کیا ہے کہ میرے نام پر جعلی بنک اکاونٹ موجود ہے

Syed Fakhir Abbas سید فاخر عباس جمعرات اکتوبر 19:23

سینیٹرز کے جعلی اکاونٹس بھی نکلنے لگے
اسلام آباد(اردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار-11 اکتوبر 2018ء) :سینیٹر عثمان کاکڑ بھی جعلی اکاونٹ کی زد میں آگئے۔سینیٹر عثمان کاکڑ نے دعویٰ کیا ہے کہ میرے نام پر جعلی بنک اکاونٹ موجود ہے۔تفصیلات کے مطابق آجکل پاکستان میں جعلی اکاونٹس کی خبریں زینت بن رہی ہیں۔اس سلسلے میں ایف آئی اے نے کافی عرصے سے تحقیقات کرنا شروع کردی تھی تاہم اس حوالے سے اہم موڑ تب آیا جب سابق صدر آصف زرداری کے قریبی ساتھی حسین لوائی کو گرفتار کیا گیا اور اس کے ساتھ ہی متعدد بے نامی اکاونٹس کی چھان بین شروع کر دی گئی۔

اس کیس میں اہم موڑ تب آیا جب کراچی کا فالودہ فروش اچانک ارب پتی نکل آیا تاہم اس حوالے سے بات کرتے ہوئے فالودہ فروش نے لاعلمی کا اظہار کیا۔اس کے بعد لاڑکانہ اور جھنگ کے غریب طلبا کے اکاونٹس میں بھی کروڑوں روپے کا انکشاف ہوا۔

(جاری ہے)

2روز قبل محکمہ صحت کی ایک ملازمہ ثروت زہرہ کا بھی اکاونٹ منظر عام پر آیا ۔ اس معاملے کو سینیٹ کمیٹی میں بھی اٹھایا گیا۔سینیٹ میں کمیٹی کا اجلاس سینیٹر عثمان کاکڑ کی سربراہی میں ہوا۔اس کمیٹی کے سربراہ عثمان کاکڑ کا کہنا تھا کہ ان کے نام پر بھی جعلی اکاونٹ موجود ہے۔عثمان کاکڑ نے دعویٰ کیا کہ انکے نام پر جعلی بنک اکائونٹ فعال ہے کمیٹی کے اجلاس کے دوران سنیٹر عثمان کاکڑ نے کہا میں نے ایف آئی اے کے ڈی جی کو درخواست دیدی ہے۔