سابق چیف جسٹس سعید الزمان صدیقی کی زوجہ کا پلاٹ قبضہ مافیا نے ہڑپ لیا

چار دیواری کروانے کے لیے آنیوالی زوجہ سعید الزمان صدیقی کو حبس بے جا میں رکھا اور دھمکیاں بھی دیں

Syed Fakhir Abbas سید فاخر عباس ہفتہ نومبر 19:19

سابق چیف جسٹس سعید الزمان صدیقی کی زوجہ کا پلاٹ قبضہ مافیا نے ہڑپ لیا
اسلام آباد(اردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار-17 نومبر 2018ء) :سابق چیف جسٹس سعید الزمان صدیقی کی زوجہ کو قبضہ مافیا کی جانب سے غیر مناسب سلوک کا نشانہ بنایا گیا۔قبضہ مافیا انکا پلاٹ ہڑپنا چاہتے ہیں۔تفصیلات کے مطابق پنجاب بھر میں ایک جانب جہاں تجاوزات اور قبضہ مافیا کے خلاف آپریشن کیا جارہا ہے تو دوسری جانب قبضہ مافیا اس قدر دیدہ دلیر ہو چکا ہے کہ انہوں نے روالپنڈی میں سابق چیف جسٹس کے پلاٹ پر ہی قبضہ کر لیا ہے۔

سعید الزمان صدیقی کی زوجہ اپنے پلاٹ پر چار دیواری کروانے کے لیے آئے تو مسلح افراد نے انکو دھمکیاں دیں،حبس بے جا میں رکھا اور پلاٹ سے نکال دیا ۔جس پر جسٹس (ر) سعید الزمان صدیقی کے صاحبزادے نے والدہ کو دھمکانے والوں کے خلاف مقدمہ درج کروا دیا۔سابق چیف جسٹس سعید الزمان صدیقی کے بیٹے نے تھانا تریٹ مری کو درخواست دی۔

(جاری ہے)

مقدمے کی درخواست کے مطابق سابق چیف جسٹس پاکستان سعیدالزماں صدیقی کی اہلیہ کوقبضہ مافیانےحبس بےجامیں رکھا۔

میری والدہ اپنےپلاٹ پر4 دیواری بنوانے آئیں جس پر4مسلح افراد نےدھمکیاں دیں۔چاروں مسلح افرادنے چاردیواری پرکام رکوادیا۔میڈیا سے بات کرتے ہوئے جسٹس (ر) سعید الزمان کے بیٹے کاکہنا تھا کہ مسلح افرادنےہوائی فائرنگ بھی کی۔چاروں مسلح افراد نے والدہ کوحبس بیجا میں رکھا اورپلاٹ سےنکال دیا