Aik Qaidi Bemaar Para - Joke No. 882

ایک قیدی بیمار پڑا - لطیفہ نمبر 882

ایک قیدی بیمار پڑا تو اس کی مزاج پرسی کے لئے جیلر آیا پوچھا کہ کسے ہو؟ قیدی نے تکلیف سے کراہتے ہوئے کہا۔ ”جی پہلے ٹانگ میں درد تھا وہ ڈاکٹر نے کاٹ کر پھینک دی۔پھر بازو میں درد تیز ہوا تو اسے بھی کاٹ ڈالا۔ اب کان میں شدید درد ہے لازماً اسے بھی کاٹ دیا جائے گا ”اچھا تو تم آہستہ آہستہ جیل سے فرار ہونا چاہتے ہو؟ جیلر نے تشویش ظاہر کی۔

مزید لطیفے

نوکرانی

naukri

شخص

shaks

اسی سالہ بوڑھے

80 Sala Borha

نوجوان حسین

Nojawan Haseen

ایک مصور

aik musawir

استاد شاگرد سے

Ustad Shagird se

ایک روز

aik roz

کیچڑ اور مٹی

keechar aur mitti

لکھا ہوا کھیل

Likha Huwa khail

استاد

Ustaad

ایک شرابی سڑک پر

aik sharabi sarak par

ایک دوت دوسرے دوست سے

Aik dost dusre dost se

Your Thoughts and Comments