Aik Sahib

ایک صاحب

ایک صاحب حجام کی دکان پر بیٹھے بال کٹوا رہے تھے کہ اچانک آواز سنائی دی۔ ”امجد صاحب آپ کے گھر میں آگ لگ گئی ہے“۔ وہ صاحب یہ سنتے ہی اچھل کر کھڑے ہوئے اور حجام کو دھکا دے کر پرے کیا اور دکان میں داخل ہونے والے آدمی کو دھکا دیا اور باہر پہنچ گئے‘ باہر جا کر اور تیزی سے بھاگے اور سامنے ایک ایک ریڑھی والے کی ریڑھی سے ٹکرائے اور ریڑھی الٹ دی اور خود بھی زمین پر جا گرے۔ اس کے بعد جھینپتے ہوئے اٹھے اور کہنے لگے:”حد ہو گئی بھئی‘ بھلا میرا نام امجد کب ہے؟“۔

Your Thoughts and Comments