محکمہ پیرول اینڈپروبیشن خیبر پختونخوا نے صوبہ بھر میں 226 ملزمان کو پروبیشن پر رہا کردیئے

پیر نومبر 18:40

پشاور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 12 نومبر2018ء) محکمہ پیرول اینڈپروبیشن خیبر پختونخوا نے اکتوبر 2018 میں صوبہ بھر میں 226 ملزمان جو کہ مختلف نوعیت کے مقدمات میں قید تھے پروبیشن پر رھاکئے۔ ڈائریکڑ پیرول اینڈ پروبیشن معلم جان ارمزئی کی خاص توجہ سے محکمہ کی کاکردگی مزید بہتر ہوہی ہے۔

(جاری ہے)

محکمہ پیرول اینڈ پروبیشن جو کہ قیدیوں کی اصلاح میں اہم اور موئثر کر دار اداکرتاہے ماہ اکتور 2018 میں مختلف عدالتوں سے 6 خواتین اور 3 کم سن بچوں سمیت 226 رہا کئے ہیں مزیدبراں اس وقت صوبہ بھر میں 3171 مجرمان محکمہ کی زیر نگرانی پروبیشن پر ہیں جن میں 74 زنانہ04 بچیاں اور کم عمر بچے بھی شامل ہیں۔

اس کے علاوہ 2985 پروبیشنرز پروبیشن پر ہیں اور پیرول پر وبیشن افسر کی زیر نگرانی ہیں محکمہ پروبیشن نے 31 اکتوبر تک 3171 مجرمان مختلف عدالتوں سے پروبیشن پر رہا کئے ہیں جس سے حکومت کو سالانہ کروڑوں روپے کی بچت ہوئی ہے محکمہ پیرول اینڈ پروبیشن خیبرپختونخوا کے ایک پریس نوٹ کے مطابق محکمہ کی کارکردگی کو مزید بہتر بنانے کیلئے صوبائی حکومت خاص توجہ دے رہی ہے جس سے معاشرے سے جرائم کے خاتمے اور جیلوں میں گنجائش کی کمی پر بڑی حد تک قابو پایا جائے گا۔

متعلقہ عنوان :

پشاور شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments