نیب نے پاکستان سپورٹس بورڈ میں بدعنوانی ، قواعد وضوابط خلاف ورزی کا نوٹس لے لیا

چیئرمین جسٹس جاوید اقبال نے وفاقی وزیر ریاض پیرزادہ اور ڈی جی سپورٹس بورڈ اختر گنجیرا کے خلاف انکوائری کا حکم دیا

جمعرات فروری 19:01

نیب نے پاکستان سپورٹس بورڈ میں بدعنوانی ، قواعد وضوابط  خلاف ورزی کا ..
اسلام آباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 22 فروری2018ء) چیئرمین نیب جسٹس جاوید اقبال نے پاکستان سپورٹس بورڈ میں مبینہ طور پر بدعنوانی اور قواعد وضوابط کی خلاف ورزی کا نوٹس لیتے ہوئے وفاقی وزیر ریاض پیرزادہ اور ڈی جی سپورٹس بورڈ اختر گنجیرا کے خلاف انکوائری کا حکم دیا ہے۔شکایت کے مطابق پاکستان سپورٹس بوڈر کے مختلف شعبہ جات میں مبینہ بدعنوانی خصوصاً گزشتہ چار سالوں میں مختلف نئے پروجیکٹس جن میں نارووال سپورٹس سٹی،لیاقت جمنیزیم،مختلف کھیلوں کی فیڈریشنز کو مالی گرانٹس اور بیرون ملک وزراء،سیکرٹریز،ڈائریکٹر جنرل پاکستان سپورٹس بورڈ اور دیگر کے خاندان کے افراد کافیڈریشنز کے فنڈز پر غیر ملکی دورے کرنے اور قومی خزانے کا بے دریغ استعال اس کے علاوہ پاکستان سپورٹ بورڈ میں قواعد وضوابط کے خلاف تقرریاں،ملک کے محتلف اسٹیڈیمز کی فنڈز کے باوجود ناگفتہ بہ صورتحال اور ان کی دیکھ بھال کے فنڈز میں مبینہ طور پر خوردبرد کے علاوہ کھلاڑیوں کی ٹریننگ کے لئے عملی ٹریننگ کی بجائے مبینہ طور پر کاغذی کیمپس کا انعقاد اور مختلف کھیلوں کے سامان کے نام پر جاری فنڈز میں خوردبرد اور بدعنوانی کی شکایات شامل ہیں۔

(جاری ہے)

چیئرمین نیب جسٹس جاوید اقبال نے بلوچستان اسمبلی کی رکن انیتہ عرفان کے خلاف مبینہ طور پر کرسچین ویلفیئر ہاؤسنگ سوسائٹی،بشیر آباد کوئٹہ کے پلاٹس کو دھوکہ دہی کے ذریعے غیر مستحق مسیحیوں کو دینے کی شکایت کی جانچ پڑتال کا ڈائریکٹر جنرل نیب بلوچستان کو حکم دیا ہے اور قانون کے مطابق رپورٹ پیش کرنے کی ہدایت کی ہی۔

متعلقہ عنوان :