اسلام آباد ہائیکورٹ، طیبہ تشدد کیس میں سابق جج راجہ خرم علی خان اور ماہین ظفر کی درخواست ضمانت منظور

منگل اپریل 21:15

اسلام آباد ۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 17 اپریل2018ء) اسلام آباد ہائیکورٹ نے گھریلو ملازمہ طیبہ پر تشدد کے کیس میں سزا پانے والے سابق ایڈیشنل ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج راجہ خرم علی خان اور ان کی اہلیہ ماہین ظفر کی درخواست ضمانت منظور کرلی ہے۔

(جاری ہے)

منگل کو عدالت عالیہ کے جسٹس عامر فاروق پر مشتمل سنگل بینچ نے سابق ایڈیشنل سیشن جج اور ان کی اہلیہ کی درخواست ضمانت پر فیصلہ سناتے ہوئے ملزم خرم علی خان اور ماہین ظفر کو 50 ،50 ہزار روپے مالیت کے مچلکے جمع کرانے کی ہدایت کردی۔ سابق جج نے اپنی درخواست میں مؤقف اپنایا تھا کہ سزا ایک سال سے کم ہو تو ضمانت دی جا سکتی ہے، وہ سزا کے خلاف سپریم کورٹ میں اپیل دائر کرنا چاہتے ہیں، لہذا انہیں ضمانت دی جائے۔