ایران نے تل ابیب پر حملہ کیا تو اسے صفحہ ہستی سے مٹا دیا جائے گا،اسرائیل کی دھمکی

ْشامی معاملات میں اسرائیل مداخلت نہیں کرے گا،روس کی ترجیحات کا احترام کیا جائے،وزیر دفاع

ہفتہ اپریل 22:38

تل ابیب(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 28 اپریل2018ء) اسرائیلی وزیردفاع آویگادور لائبر مین نے خبردار کیا ہے کہ اگر ایران نے تل ابیب پر حملہ کیا تو اسے صفحہ ہستی سے مٹا دیا جائے گا،شامی معاملات میں اسرائیل مداخلت نہیں کرے گا،،روس کی ترجیحات کا احترام کیا جائے۔ غیر ملکی میڈیا کے مطابق اسرائیلی وزیردفاع آویگادور لائبر مین نے خبردار کیا ہے کہ اگر ایران نے تل ابیب پر حملہ کیا تو اس کی اینٹ سے اینٹ بجا دیں گے۔

(جاری ہے)

لائبیر مین نے واشنگٹن انسٹیٹیوٹ نامی ایک نظریاتی ادارے میں منعقدہ پینل سے خطاب کے دوران کہا کہ شام کے واقعات میں اسرائیل اپنی مداخلت کو درست نہیں سمجھتا۔لائبر مین نے کہا کہ ہمیں اسرائیل پر ایرانی حملے کا خدشہ ہے جو کہ شام کو اپنے اڈے کے طور پر استعمال کرنے کی دھن میں ہے۔اسرائیلی وزیر دفاع نے کہا کہ امریکہ کو ہم نے ایران کے معاملے میں اپنے خدشات سے آگاہ کر دیا ہے ۔ ایران کی طرف سے اسرائیل پر حملے کے خطرے پر لائبیر مین نے کہا کہ اگر ایسا ہوا تو ہم بھی تہران پر حملہ کر دیں گے مگرامید ہے کہ ایران ہمیں اشتعال دلانے سے باز رہے گا۔ روس کی شام سے متعلق پالیسیوں پر غور کرتے ہوئے وزیردفاع کا کہنا تھا کہ یہ روس کی اپنی ترجیحات ہیں جس کا ہم احترام کرتے ہیں۔