فیصل آباد میں عوام کی جانب سے منتخب کیے گئے ن لیگی نمائندے قبضہ مافیا بن گئے

Sumaira Faqir Hussain سمیرا فقیرحسین جمعرات مئی 16:46

فیصل آباد میں عوام کی جانب سے منتخب کیے گئے ن لیگی نمائندے قبضہ مافیا ..
فیصل آباد (اُردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔ 03 مئی 2018ء) : جہاں ایک طرف ن لیگی وزرا خواتین سے متعلق بازیبا الفاظ کا استعمال کر رہے ہیں وہیں دوسری جانب ن لیگی رہنماؤں نے خواتین پر تشدد بھی شروع کر دیا ہے۔ فیصل آباد میں عوام کے ووٹوں سے منتخب ہوئے ن لیگی نمائندے قبضہ مافیا بن گئے اور خواتین پر تشدد کرنے لگے ۔ میڈیا رپورٹ کے مطابق رانا پیپلز کالونی کے علاقہ ریلوے کالونی کے رہائشی طاہر حمید کے گھر لیگی وائس چئرمین ملک عرفان نے اپنے ساتھیوں کے ہمراہ قبضہ کرنے کی کوشش کی۔

کوشش ناکام ہونے پر لیگی وائس چئیرمین ملک عرفان نے خواتین کو پولیس کی موجودگی میں سر عام تشدد کا نشانہ بھی بنایا۔ طاہر حمید نے بتایا کہ ملک عرفان نے ہمارے گھر آ کر ہمیں تشدد کا نشانہ بنایا۔ ہمارا سامان اوپر سے نیچے گرایا۔

(جاری ہے)

تشدد کا نشانہ بننے والی خاتون نے کہا کہ انہوں نے ہمیں اس قدر مارا پیٹا کہ ہم چلنے پھرنے کے بھی قابل نہیں رہے۔

گھر کا کوئی سامان نہیں چھوڑا۔ ہم نے سب سے مدد مانگی ہے۔ میڈیا رپورٹ کے مطابق مذکورہ لیگی رہنما ملک عرفان اس سے قبل بھی قبضہ کرنے کے کئی واقعات میں ملوث رہا ہے۔ ملک عرفان پر متعدد تھانوں میں مقدمات بھی درج ہیں ۔ پولیس کا کہنا ہے کہ مقدمہ درج کر کے واقعہ میں ملوث افراد کو حراست میں لے لیا گیا ہے۔ پولیس نے کہا کہ کافی لوگوں کو گرفتار کر لیا ہے، مفرور لوگوں کی تلاش جاری ہے۔ واقعہ میڈیا پر آنے پر وزیر اعلیٰ پنجاب شہباز شریف نے نوٹس لیتے ہوئے سی پی او اطہر اسماعیل سے رپورٹ طلب کر لی اور حکم دیا کہ ملزمان کے خلاف سخت کارروائی کی جائے۔