عوام کو کھانے پینے، غذائیت کی معلومات دینے کے لیے پہلے نیوٹریشن کلینک کا افتتاح

پنجاب فوڈ اتھارٹی نیوٹریشن کلینک میں صرف 232روپے فیس میں مکمل مشورہ فراہم کیا جائے گا صحت مند غذا کے کلچر کو فروغ دے کر ہی غذائی مسائل پر قابو پایا جا سکتا ہے، نورالامین مینگل

جمعرات مئی 23:20

لاہور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 03 مئی2018ء) ڈائریکٹر جنرل پنجاب فوڈ اتھارٹی نورالامین مینگل نے عوام کو کھانے پینے، غذائیت کی معلومات دینے کے لیے پہلے نیوٹریشن کلینک کا افتتاح کر دیا ۔تفصیلات کے مطابق ڈی جی فوڈ اتھارٹی نورالامین مینگل نے میڈیا سے بات کرتے ہوئے کہا کہ پہلے مرحلے میں لاہور میں نیوٹریشن کلینک قائم کیا گیا ہے جبکہ دوسرے مرحلے میں تمام ڈویژنل ہیڈ کوراٹرز میں اور آخری مرحلے میں نیوٹریشن کلینک پنجاب بھر میں ضلعی سطح پر بنائے جائیں گے۔

پنجاب بھر میں نیوٹریشن کلینکس کا نیٹ ورک 14اگست 2018تک مکمل کر دیا جائے گا۔انتظار کی زحمت سے بچنے کے لیے نیوٹریشن کلینک میں چیک اپ کے لیے ٹیلی فون اور موبائل اپپ پرایڈوانس میں وقت لیا جا سکے گا۔ انہوں نے مزید بتایا کہ قومی نیوٹریشن سروے کے مطابق پنجاب میں50فی صد سے زائد افراد مختلف غذائی اجزاء کی کمی کا شکار ہیںجس کی وجہ سے مکمل ذہنی اور جسمانی نشونما نہیں ہوپاتی۔

(جاری ہے)

غذائی اجزاء کی کمی کی ایک بڑی وجہ غذائیت کے حوالے سے معلومات نہ ہونا ہے۔قدرتی غذا کے مقابلے میں گمراہ کن اشتہارات کے ذریعے عوام کوناقص خوراک کی طرف مائل کیا جا رہا ہے۔اس حوالے سے پنجاب فوڈ اتھارٹی نے عوامی فلاح کے لیے ایک اور اہم قدم اٹھاتے ہوئے نیوٹر یشن کلینک کا باقاعدہ آغاز کر دیا ۔عوام غذائی ماہرین سے کلینکس کے علاوہ ٹیلی فون پر بھی کھانے پینے کے متعلق مکمل راہنمائی حا صل کر سکیں گے۔

ڈی جی فوڈ اتھارٹی نے واضح کیا کہ : نیوٹریشن کلینک مہنگے ہونے کے باعث عام آدمی کی پہنچ سے باہر ہیں لیکن پنجاب فوڈ اتھارٹی نیوٹریشن کلینک میںہزراوں کی بجائے صرف 232روپے فیس میں مکمل مشورہ فراہم کیا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ صحت مند غذا کے کلچر کو فروغ دے کر ہی غذائی مسائل پر قابو پایا جا سکتا ہے۔

مزید متعلقہ خبریں پڑھئیے‎ :

متعلقہ عنوان :