ایم کیوایم کا 22 اگست سے پہلے کا دور واپس نہیں آنے دینگے،وزیراعلی سندھ

ایم کیوایم کو پوری اجازت ہے ادھر ادھر سے لوگوں کو جمع کرکے جلسہ کرلیں،ام نفرت پھیلانے والوں کومسترد کرچکے،کراچی کے لوگ پاکستان پیپلزپارٹی کو ہی ووٹ دیں گے ‘ وزیراعلی سندھ سید مراد علی شاہ کی میڈیا سے گفتگو

ہفتہ مئی 21:25

ایم کیوایم کا 22 اگست سے پہلے کا دور واپس نہیں آنے دینگے،وزیراعلی سندھ
کراچی(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 05 مئی2018ء) وزیراعلی سندھ سید مراد علی شاہ نے کہا ہے کہ ایم کیوایم کو پوری اجازت ہے ادھر ادھر سے لوگوں کو جمع کرکے جلسہ کرلیں، 22 اگست سے پہلے والے دور کو واپس نہیں آنے دیں گے، عوام نفرت پھیلانے والوں کومسترد کرچکے،،کراچی کے لوگ پاکستان پیپلزپارٹی کو ہی ووٹ دیں گے ۔ ہفتہ کو کراچی میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے وزیراعلی سندھ مراد علی شاہ نے کہا کہ ملک میں سیاست کی سب کو اجازت ہے، کالا دور گزر گیا، 80 کی دہائی کا کالا دور22 اگست 2016 کو ایم کیوایم والوں نے خود ختم کیا، ہم 80 کی دہائی کے کالے دور کو واپس نہیں آنے دیں گے۔

انہوں نے کہا کہ ٹنکی گرا ئو نڈ کسی نے نہیں سنا تھا، بلاول نے جلسہ کیا تو ایم کیوایم کو بھی ٹنکی گرانڈ یاد آیا، میں کچھ کہوں گا توایم کیوایم کہے گی ان کا جلسہ خراب کررہا ہوں۔

(جاری ہے)

انہوں نے کہا کہ ملک میں ہر ایک کوسیاست کی اجازت ہے، ایم کیوایم کو پوری اجازت ہے ادھر ادھر سے لوگوں کو جمع کرکے جلسہ کرلیں، لیکن ہم 22 اگست سے پہلے والے دور کو واپس نہیں آنے دیں گے۔

مراد علی شاہ نے کہا کہ عوام نفرت پھیلانے والوں کومسترد کرچکے ہیں، کراچی کے لوگ پاکستان پیپلزپارٹی کو ہی ووٹ دیں گے، جو پمفلیٹ تقسیم کیے گئے ان سے کچھ نہیں ہوگا، پہلے بھی ایسی باتیں کرکے کراچی کے لوگوں ورغلایا گیا، اب کراچی والے ان لوگوں کی باتوں میں نہیں آئیں گے۔وزیراعلی سندھ نے کہا کہ میئر کراچی اگر کام کرنا چاہتے ہیں توان کے پاس پورے اختیارات ہیں، اگر کام نہیں کرنا چاہتے تویہی کہتے رہیں کہ اختیار اور پیسے نہیں۔