آشیانہ سکیم ہائوسنگ اسکینڈل ،

احد چیمہ اور شاہد شفیق مزید 7 روزہ جسمانی ریمانڈ پر نیب کے حوالے احتساب عدالت نے دیگر دو ملزمان چیف انجینئر پی ایل ڈی سی بلال قدوائی ،امتیاز حیدر کو جوڈیشل ریمانڈ پر جیل بھجوا دیا

جمعہ مئی 16:57

آشیانہ سکیم ہائوسنگ اسکینڈل ،
لاہور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 11 مئی2018ء) احتساب عدالت نے آشیانہ سکیم ہائوسنگ اسکینڈل کے ملزمان سابق ڈائریکٹر جنرل لاہور ڈویلپمنٹ اتھارٹی اے احد چیمہ اور نجی کمپنی کے مالک شاہد شفیق کو مزید 7 روزہ جسمانی ریمانڈ پر نیب کے حوالے کر دیا جبکہ دیگر دو ملزمان چیف انجینئر پی ایل ڈی سی بلال قدوائی اور امتیاز حیدر کو جوڈیشل ریمانڈ پر جیل بھجوا دیا ۔

گزشتہ روز لاہور کی احتساب عدالت میں آشیانہ ہائوسنگ اسینڈل کیس کی سماعت ہوئی، سابق ڈی جی ایل ڈی اے احد چیمہ اورنجی کمپنی کے مالک شاہد شفیق سمیت دیگر ملزمان کو عدالت میں پیش کیا گیا۔

(جاری ہے)

احد چیمہ اور شاہد شفیق پر کروڑوں روپے کی بے ضابطگیوں کا الزام ہے۔ ملزمان کو جسمانی ریمانڈ ختم ہونے پر احتساب عدالت پیش کیا گیا۔نیب کی جانب سے ملزمان کے مزید جسمانی ریمانڈ کی استدعا کی گئی۔

نیب حکام کا کہنا تھا کہ ملزمان سے ابھی مزید تفتیش کرنی ہے لہٰذا ریمانڈ دیا جائے۔ احتساب عدالت کے جج سید نجم الحسن نے احد چیمہ اور شاہد شفیق کو 7 روزہ جسمانی ریمانڈ پر نیب کے حوالے کر دیا۔ نیب کی جانب سے دونوں ملزمان کو 18 مئی کو دوبارہ پیش کیا جائے گا۔ چیف انجینئر پی ایل ڈی سی بلال قدوائی اور امتیاز حیدر کو جوڈیشل ریمانڈ پر جیل بھیج دیا گیا۔