ہیپاٹائٹس سی بارے عوامی شعور بیدار کرنے کیلئے خصوصی ہیلتھ ایجوکیشن مہم کاآغاز

جمعہ مئی 12:10

فیصل آباد۔18 مئی(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 18 مئی2018ء) محکمہ صحت پنجاب نے ہیپاٹائٹس سی کے بارے میںعوامی شعور بیدار کرنے کیلئے خصوصی ہیلتھ ایجوکیشن مہم کاآغازکردیا ہے اور کہاہے کہ مذکورہ بیماری کی ابتدائی علامات ظاہر ہوتے ہی فوری طور پر علاج معالجہ کا آغازکر دیا جائے اور احتیاطی تدابیر پر بھی عملدرآمد یقینی بنایا جائے ۔محکمہ صحت فیصل آباد ڈویژن کے ذرائع نے بتایا کہ ہیپاٹائٹس سی کے علاج کا دورانیہ عام طور پر 6 ماہ ہے لیکن مخصوص حالات میں ایک سال تک بھی ہوسکتا ہے ۔

انہوں نے کہا کہ ہیپاٹائٹس سی کے مریضوں کو چا ہیے کہ وہ نیم حکیم ، عطائی اورہومیوسے متعلق غیر مستند افراداور گھریلو ٹوٹکوں کی بجائے ماہرین علاج جگر سے رجوع کریں۔ انہوں نے کہاکہ دوران علاج شربت فولاداورآئرن کی گولیوں کے علاوہ غیر ضروری ادویات کے استعمال، ٹیکے اور ڈرپ لگوانے سے بھی گریزکیاجائے۔

(جاری ہے)

انہوں نے ہیپاٹائٹس سی کے مریضوں کوہدایت کی کہ وہ خون کے عطیات دینے سے بھی گریز کریں۔

انہوںنے بتایاکہ تمام ڈسٹرکٹ ہیڈکوارٹرز ہسپتالوں میں ہیپاٹائٹس کے ٹیسٹوں اور علاج معالجہ کی سہولیات دستیاب ہیں جہاں ماہرین طب سمیت متعلقہ عملہ مریضوں کو تمام ممکن سہولیات کی بہم رسانی کیلئے موجودہے۔انہوںنے کہاکہ اگر کسی مریض کو علاج معالجہ نہ ہونے کے بارے میں کسی قسم کی کوئی شکایت ہو تو وہ فوری طور پر متعلقہ مرکزصحت کے انچارج ، ہسپتال کے میڈیکل سپرنٹنڈنٹ ، ڈپٹی و ڈسٹرکٹ آفیسرز ہیلتھ اور چیف ایگزیکٹو آفیسرز ڈسٹرکٹ ہیلتھ اتھارٹیز سے بھی رابطہ کر سکتاہے۔

مزید متعلقہ خبریں پڑھئیے‎ :

متعلقہ عنوان :