سندھ اسمبلی کی مدت ختم، اسٹینڈنگ کمیٹیز کے 40 سربراہوں نے گاڑیاں واپس نہ کیں

منگل مئی 22:02

کراچی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 29 مئی2018ء) سندھ اسمبلی کی آئینی مدت ختم ہونے کے باوجود اسمبلی اسٹینڈنگ کمیٹیز کے 40 چیئرمین حضرات نے سرکاری گاڑیاں واپس نہ کیں، سرکاری گاڑیاں منگل کی صبح 9 بجے جمع کروائی جانی تھیں۔۔سندھ اسمبلی کی آئنی مدت ختم ہونے کے باوجود اسمبلی کی اسٹینڈنگ کمیٹی کے چیئر مین اور اراکین اسمبلی نے تاحال اپنی گاڑیاں جمع نہیں کرائیں۔

اسمبلی عملہ انتظار کرتا رہا مگر چیئرمین حضرات نہیں پہنچے۔

(جاری ہے)

چیئرمین اور رکن اسمبلی نہ ہونے کے باوجود غلام شاہ، نواب تیمور تالپور، کلثوم چانڈیو سندھ اسمبلی کی گاڑیوں میں گھومتے رہے۔ رخسانہ شاہ ، محمد معین پیرزادہ اور خواجہ اظہار الحسن بھی سرکاری گاڑیاں استعمال کر رہے ہیں جبکہ مہیش کمار ملانی، اعجاز شاہ بخاری، سہراب سرکی، اویس قادر شاہ، ساجد جوکھیو، سیما خالد احمد، سید سردار احمد، اور نصرت سحر عباسی نے بھی گاڑی واپس نہیں کی جبکہ کامران اختر، اور نثار کھوڑو اور دیگر بھی تاحال سندھ اسمبلی کی گاڑیوں میں گھوم رہے ہیں۔

متعلقہ عنوان :