ْٹھنڈے ماحول اور صفائی کے باعث مرغیوں کو بیماریوں سے بچایا جا سکتا ہے ، ماہرین لائیو سٹاک

جمعہ جون 16:49

فیصل آباد۔8جون(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 08 جون2018ء) ماہرین لائیو سٹاک و ڈیری ڈویلپمنٹ نے موسم گرماکے دوران مرغیوں کو موسمی بیماریوں سے بچانے کیلئے شیڈز کی صفائی ، پانی کے سپرے ، ایئر کولرزکی تنصیب کی ہدایت کی ہے اورکہا ہے کہ مرغی پال حضرات شدید گرمی کے باعث فوری احتیاطی تدابیر پر عملدرآمد یقینی بنائیں تاکہ مرغیوں کو ہرقسم کی بیماریوں اور موسمی اثرات سے بچانا ممکن ہو سکے، ایک ملاقات کے دوران انہوںنے بتایا کہ موسم گرما کی شدت کے باعث مرغیوں میں رانی کھیت اور سانس کی بیماری پیدا ہونے کا شدید خدشہ ہوتا ہے ، انہوں نے بتایاکہ اگر شیڈز میں موجود مرغیاں سست، نڈھال ہونے کیساتھ خوراک کم کھائیں اور ان کی چونچ ، ناک ، آنکھ سے لیس دار مادے کا اخراج محسوس ہو تو یہ رانی کھیت کی بیماری کی علامات ہیں، اگر مرغیاں سبزی مائل پیچش کے علاوہ انڈوں کی پیداوار میں کمی کریں تو یہ سانس کی بیماری کی علامات کا حصہ ہے، پولٹری فارمرز فوری طور پر شیڈز کی صفائی یقینی بنائیں اور شیڈز میں پانی کے سپرے کے علاوہ پنکھے اور ایئرکولر بھی نصب کریں تاکہ ٹھنڈے ماحول اور صفائی کے باعث مرغیوںکو بیماریوں سے بچایا جا سکے۔

متعلقہ عنوان :