اڈیالہ جیل میں نواز شریف کا ڈاکٹر رونے لگ گیا

سابق وزیراعظم نواز شریف نے جیل میں ملاقات کرنے والے پارٹی رہنماؤں سے کہا کہ بیماری کے دوران مجھے جیل میں چیک کرنے والا ڈاکٹر روپڑا اور اس نے بتایا کہ آج مجھے گردش حالات پر رونا آیا ہے

Muqadas Farooq مقدس فاروق اعوان جمعرات اگست 14:25

اڈیالہ جیل میں نواز شریف کا ڈاکٹر رونے لگ گیا
لاہور (اردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔16 اگست 2018ء) اڈیالہ جیل میں نواز شریف کا ڈاکٹر رونے لگ گیا۔میڈیا رپورٹس کے مطابق مسلم لیگ ن کے قائداور سابق وزیر اعظم میاں محمد نواز شریف اور ان کی صاحبزادی مریم نواز اور داماد کیپٹن ریٹائرڈ صفدر سے ن لیگی رہنما ؤں نے آج اڈیالہ جیل میں ملاقات کی۔ راولپنڈی کی اڈیالہ جیل میں نواز شریف نے پارٹی رہنماؤں سے ملاقات کے دوران کہا کہ بیماری کے دوران مجھے جیل میں چیک کرنے والا ڈاکٹر روپڑا اور اس نے بتایا کہ آج مجھے گردش حالات پر رونا آرہا ہے۔

ذرائع کے مطابق ملاقات کرنے والے پارٹی رہنماؤں میں سینیٹر مشاہد حسین سید، میر حاصل بزنجو،، پرویز ملک ،،طلال چوہدری،، زبیر محمود اور غلام دستگیر کے علاوہ صاف پانی کمیشن کے سابق سربراہ قمرالاسلام کے بچے شامل تھے۔

(جاری ہے)

مریم نواز نے ملاقات کے دوران قمرالاسلام کے بچوں کو پیار کیا اور کہا کہ بچوں گھبرانا نہیں ہم تمھارے ساتھ ہیں۔یاد رہے نواز شریف نے گزشتہ روز کمرہ عدالت سے باہر میڈیا سے غیر رسمی گفتگو بھی کی تھی اس موقع پر صحافی نے نواز شریف سے سوال کیا کہ کیا آپ کو مسجد میں جا کر نماز ادا کرنے کی اجازت ہے؟ ۔

تو نواز شریف نے جواب دیا کہ باہر جانے کی اجازت نہیں، نماز سیل میں ہی ادا کرتا ہوں۔۔۔مریم نواز سے روز ملاقات نہیں ہوتی۔۔۔مریم نواز سے بھی ملاقاتیوں کے ساتھ ہفتے بعد ہی ملاقات ہوتی ہے۔صحافی نے نواز شریف سے طبعیت سے متلعق پوچھا تو انہوں نے جواب دیا کہ جی الحمد اللہ ٹھیک ہوں۔صحافی نے سوال کیا کہ کیا آپ قید تنہائی میں ہیں۔ ؟۔تو نواز شریف نے جواب دیا کہ جی آپ کہہ سکتے ہیں۔ اس سے پہلے نواز شریف سے جیل میں ملاقات کرنے والے صحافیوں نے بھی اس بات کا ذکر کیا ہے کہ نواز شریف جیل میں قید تنہائی کی زندگی گزار رہے ہیں۔