ساہیوال میں بہو نے آشنا سے مل کر ساس کو قتل کرکے لاش نذر آتش کردی

مقدمہ درج کرلیا گیا، ایک ملزم مرسلین گرفتار

ہفتہ ستمبر 18:53

ساہیوال میں بہو نے آشنا سے مل کر ساس کو قتل کرکے لاش نذر آتش کردی
ساہیوال(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - آن لائن۔ 19 ستمبر2020ء) نواحی چک52۔فائیو۔ایل میں ایک دوکاندار کی بوڑھی ماں ضمیراں 60سالہ کو اسکی بہو ثمینہ ناز نے دو ساتھیوں کے ہمراہ گلہ دبا کر ہلا ک کر کے لاش نذر آتش کر دی۔مقدمہ درج۔ایک ملزم گرفتار۔ واقعات کے مطابق اسی چک کے دوکاندار محمد اخلاص کی ماں ضمیراں اپنی بہو ثمینہ ناز کے ہمراہ رہتی تھی جس نے اپنے کزن مر سلین سے ناجائز تعلقات استوار کر رکھے تھے جسے ضمیراں نا پسند کر تی تھی۔

(جاری ہے)

اور اس کی ساس نے مر سلین کے انکے گھر آنے پر پابندی لگا دی۔جس کا ثمینہ بہو اورملزموں نے برا منایا ۔جب ضمیراں کے دونوں بیٹے دوکان پر چلے گئے تو مرسلین،ذو القفار اورثمینہ ناز نے گلہ دبا کر ضمیراں بی بی کو ہلاک کر کے لاش کو آگ لگا دی اور ملزم مر سلین کے باپ نی25جون کو اتفاقی حادثہ قرار دلوا دیا۔ پوسٹ مارٹم رپورٹ میں مقتولہ کی موت گلہ دبانے سے قرار دی گئی تو پولیس نے مقتولہ کے بیٹے محمد اخلاق کی مد عیت میں مقدمہ 436,302اور34ت پ درج کر کے ایک ملزم مر سلین کو گرفتار کر لیا۔

متعلقہ عنوان :