وزیراعظم عمران خان کی بیان پر ایک مرتبہ پھر سوال اُٹھا دئیے گئے

وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ سوائے مصر کے سب کے پاس ہمارے مقابلے میں زیادہ پانی دستیاب ہے، تاہم مصر کے صرف ایک دریا میں پاکستان کے تمام دریاؤں کی بانسبت 13 گنا زیادہ پانی ذخیرہ کرنے کی صلاحیت کا انکشاف ہوا ہے

Danish Ahmad Ansari دانش احمد انصاری جمعرات اپریل 19:40

وزیراعظم عمران خان کی بیان پر ایک مرتبہ پھر سوال اُٹھا دئیے گئے
اسلام آباد (اُردو پوائنٹ، تازہ ترین اخبار، 8اپریل 2021) وزیراعظم عمران خان نے اپنے ایک بیان میں کہا تھا کہ سوائے مصر کے سب کے پاس ہمارے مقابلے میں زیادہ پانی دستیاب ہے، وزیراعظم عمران خان کے اس بیان پر سوالات اُٹھا دئیے گئے ہیں۔ تفصیلات کے مطابق وزیراعظم عمران خان کے بیان پر ایک مرتبہ پر سوالات اُٹھاتے ہوئے، اُنہیں اُن کی ناقص معلومات اور کمزور ذرائع معلومات پر تنقید کا نشانہ بنایا جا رہا ہے۔

وزیراعظم عمران خان نے اپنے ایک بیان میں کہا تھا کہ سوائے مصر کے سب کے پاس پاکستان کے مقابلے میں زیادہ پانی دستیاب ہے۔ جبکہ اب ایک رپورٹ میں انکشاف ہوا ہے کہ مصر کے صرف ایک دریا’دریائے نیل‘ میں ہی پاکستان کے تمام دریاؤں سے 13 گنا زیادہ پانی ذخیرہ کیا جا سکتا ہے۔

(جاری ہے)

پانی کے ذخائر کے حوالے سے وزیراعظم کو کس نے غلط معلومات دیں ؟وزارت آبی وسائل میں نئی بحث چھڑ گئی ہے۔

عوام کے سوالوں کا جواب دیتے ہوئے وزیراعظم نے پانی کے حوالے سے مصر کی مثال دی تھی ۔مصر میں پانی ذخیرہ کرنے کی صلاحیت کے حوالے سے واپڈا کی دستاویزات سامنے آ گئی ہیں۔دستاویز کے مطابق مصر میں صرف دریائے نیل پر پانی ذخیرہ کرنے کی صلاحیت 13 کروڑ 20 لاکھ ایکڑ فٹ ہے جبکہ پاکستان کے سندھ سمیت تمام دریاوں پر پانی ذخیرہ کرنے کی صلاحیت 1 کروڑ 15 لاکھ ایکڑ فٹ ہے ۔

دنیا کے 6 بڑے دریائی تاسوں میں پاکستان کے پاس پانی ذخیرہ کرنے کی صلاحیت سب سے کم ہے۔پاکستان میں پانی کے ذخائر صرف 1 کروڑ 15 لاکھ ایکڑ فٹ کے ہیں۔امریکہ کی صرف ایک ریاست فلوریڈہ میں پانی کے ذخیرہ کی گنجائش 5 کروڑ 96 لاکھ ایکڑ فٹ ہے ۔واضح رہے کہ وزیراعظم عمران خان کو پہلے بھی اُن کی بیانات کی وجہ سے سوشل میڈیا صارفین کی جانب سے تنقید کا نشانہ بنایا جاتا ہے۔ ایک مرتبہ اپنے ایک بیان میں انہوں نے کہا تھا کہ جرمنی اور جاپان ہمسایہ ملک ہیں، جس پر سوشل میڈیا پر مخالفین نے اُن پر سینکڑوں طنزیہ پوسٹ کیں۔