مہران یونیورسٹی آف انجینئرنگ اینڈ ٹیکنالوجی جامشورو اور بیت المال پاکستان کے درمیان معاہدہ طے پا گیا

بیت المال پاکستان کی تعاون سے جامعہ مہران کے کل 50 ذہین اور ضرورتمند طلبہ و طالبات کو اسکالرشپ دی جائیں گی

حیدرآباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 17 جون2021ء)مہران یونیورسٹی آف انجینئرنگ اینڈ ٹیکنالوجی جامشورو اور بیت المال پاکستان کے درمیان معاہدہ طے پا گیا، معاہدے پر جامعہ مہران کے وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر محمداسلم عقیلی اور بیت المال پاکستان کے مینیجنگ ڈائریکٹر ملک ظہیر احمد کھوکھر نے دستخط کئے، معاہدے کے مطابق بیت المال پاکستان کی تعاون سے جامعہ مہران کے کل 50 ذہین اور ضرورتمند طلبہ و طالبات کو اسکالرشپ دی جائیں گی، اسکالرشپ کے لئے بیچلرز، ماسٹرز، ایم فل اور پی ایچ ڈی کرنے والے طالبعلم اور اسکالرز شامل ہوں گے۔

(جاری ہے)

جامعہ مہران کے وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر محمد اسلم عقیلی نے کہا کہ جامعہ مہران کی شفافیت، بہتر تعلیمی معیار اور ساکھ کی وجہ سے نہ صرف ادارے بلکہ مخیر خاندان اور افراد بھی جامعہ مہران کو اسکالرشپ مہیا کرتے ہیں، انہوں نے کہا کہ بیت المال پاکستان ان میں ایک اور اضافہ ہے، انہوں نے کہا کہ جامعہ مہران کے ضرورت مند اور ذہین طالبعلموں کے مسائل حل کرنا ہماری اولین ترجیح ہے، ایم ڈی بیت المال پاکستان ملک ظہیر احمد کھوکھر نے بھی جامعہ مہران کی شفافیت، بہتر رینکنگ اور اسکالرشپ پالیسی کی تعریف کی، معاہدے کی تقریب میں جامعہ مہران کے اسٹوڈنٹس فنانشل ایڈ آفس کے فوکل پرسن ڈاکٹر عامر محمود سومرو، ڈائریکٹر اسٹوڈنٹس افیئرس ڈاکٹر تنویر پھلپوتو اور بیت المال پاکستان کے افسران بھی شریک ہوئے۔

Your Thoughts and Comments