Mahir E Nafsiyat - Joke No. 1382

ماہر نفسیات - لطیفہ نمبر 1382

ایک ماں ماہر نفسیات سے بولی:”پروفیسر صاحب! میں اپنے بیٹے کے ہاتھوں سخت پریشان ہوں۔ وہ مٹی کے لڈو بنابنا کر کھاتا ہے!“ پروفیسر:”فکر مت کر یں۔ بڑا ہونے پر یہ عادت ختم ہوجائے گی۔ صبر کر یں۔“ ماں:” میں تو صبر کر لوں گی،مگر اس کی بیوی رو رو کر پاگل ہو رہی ہے۔“

مزید لطیفے

ضرورت ملازمت

Zaroorat mulazmat

ہمارے گھر کا پتہ

hamaray ghar ka pata

آئس کریم

Ice Cream

ایک مالدار

Aik maldaar

باپ بیٹے سے

Baap bete se

استاد

Ustaad

آزمائش کی کسوٹی

azmaish ki kasoti

چوہیا

chuhiya

استاد شاگرد سے

Ustaad shagird se

ایک آدمی

Aik Admi

لان میں سبزیاں

Lawn Mein sabzian

پانچ سو روپے

paanch so rupay

Your Thoughts and Comments