Aqal Band Logon Ki Nishaniyan

عقل بند لوگوں کی نشانیاں

پیر 21 جون 2021

Aqal Band Logon Ki Nishaniyan
گل نوخیز اختر
کیا آپ کو عقل بند لوگوں کی نشانیاں معلوم ہیں؟اگر نہیں تو ہم بتاتے ہیں۔یہ لوگ حس لطافت سے یکسر محروم ہوتے ہیں۔یہ لطیفہ بھی سنیں تو ہنسنے کے بجائے لطیفے کی صداقت پر سوال اُٹھا دیتے ہیں،مثلاً آپ انھیں اگر وہ ماچس والا لطیفہ سنائیں کہ”ایک استاد نے شاگرد سے پوچھا کہ توانائی کسے کہتے ہیں؟“جواب آیا”جس توے پر نائی بیٹھا ہو“ تو یہ لطیفہ سن کر فوراً سوال داغ دیں گے:”پا جی!کس اسکول کا اُستاد تھا یہ؟“
عقل بند لوگوں کی نشانی یہ ہے کہ یہ ہر وقت بوکھلائے بوکھلائے پھرتے ہیں۔

کسی کی آدھی بات سن کر فوراً پورا مطلب نکال لیتے ہیں۔یہ میٹرک میں اس لئے سائنس نہیں لیتے کہ انھیں کونسا سائنسدان بننا ہے،تاہم عملی زندگی میں یہ کورونا وائرس سے لے کر ہوائی جہاز کے حادثے تک کی تکنیکی وجوہ کے بارے میں جانتے ہیں۔

(جاری ہے)


یہ اے ٹی ایم کے باہر کھڑے ہوں تو بار بار شیشے میں سے اندر جھانک کر دیکھتے ہیں اور پھر بُرا سا منہ بنا کر باقی لوگوں سے کہتے ہیں:”پتا نہیں اندر کیا کر رہا ہے؟“یہ دکان سے دو ٹافیاں بھی خریدیں تو ڈبل شاپر کی فرمائش کر دیتے ہیں۔

یہ کسی کو پہلی بار فون کریں تو اپنا نام بتانے کے بجائے دوسرے کی تفصیلات پوچھنے لگتے ہیں۔اگر کسی کے پاس ان کا نمبر محفوظ نہ ہو اور وہ نامعلوم نمبر سمجھ کر فون نہ اُٹھائے تو یہ کالیں کرکے مت مار دیتے ہیں،لیکن کبھی ایک ایس ایم ایس (SMS) کرکے اپنا نام بتانے کی زحمت نہیں کرتے۔دوسرا شخص بادل نخواستہ فون اُٹھا لے تو دوسرے شخص کی تصدیق کیے بغیر ”ہیلو“ کا لفظ سنتے ہی مدعا بیان کر دیتے ہیں۔

انھیں ہر وہ پرفیوم پسند ہوتا ہے،جس کی خوشبو پانچ یونین کونسلوں تک جائے۔یہ ہمیشہ جینز کی پینٹ کو ”زین کی پینٹ“ کہتے ہیں۔یہ کسی جنازے کے ساتھ قبرستان جائیں تو میت کو دفنانے کے بجائے دیگر قبروں میں دلچسپی ظاہر کرنے لگتے ہیں:”پا جی!یہ دیکھیں ایک جیسی تین قبریں۔میرا خیال ہے کہ ایک ہی خاندان کی ہوں گی۔“
یہ قل خوانی میں شریک ہوں تو اُسے بھی گٹکیں پڑھنے کا مقابلہ سمجھتے ہیں،لہٰذا سب سے بڑی ڈھیری لگا کر بیٹھ جاتے ہیں۔

شادی میں شریک ہوں تو کھانا شروع ہوتے ہی قورمے کی ڈش کے سامنے ہی پلیٹ میں ڈال کر کھانے لگتے ہیں،تاکہ بار بار نہ آنا پڑے۔کھانے کے بعد بوتل کا پہلا گھونٹ لیتے ہی اعلان کر دیتے ہیں:”دو نمبر ہے۔“بازار میں کوئی شخص شوارما کھا رہا ہو تو یہ چپکے سے اُس کے قریب جا کر انکشاف فرماتے ہیں:”پا جی!یہ مری ہوئی مرغیوں کا ہوتا ہے۔“
یہ لوگ ہمیشہ ایسا کاروبار کرنے کا منصوبہ بناتے ہیں،جس کے بارے میں انھیں ککھ پتا نہیں ہوتا۔

یہ اپنے بچوں میں بھی اپنی قابلیت منتقل کرنے کا کوئی موقع ہاتھ سے نہیں جانے دیتے،لہٰذا رات کو بڑے فخر سے بتا رہے ہوتے ہیں کہ دجال،برمودا ٹرائی اینگل کے اندر رہتا ہے۔
ان کے گھر کے دروازے پر ماش کی دال گری ہوئی ہو تو ان کے ہاتھ پاؤں پھول جاتے ہیں کہ کالا جادو ہو چکا ہے۔انھیں موبائل پر دس لاکھ کا انعام نکلنے کی خوش خبری سنائی جائے تو یہ فوراً سجدہ شکر بجا لاتے ہیں۔

ان کے ہمسائے میں اگر کوئی نیا ریفریجریٹر خریدے تو یہ فوراً اُس سے پوچھتے ہیں:”کتنے کا ملا؟“ہمسایہ جو بھی جواب دے،ان کا ایک ہی جواب ہوتا ہے:”مہنگا لے لیا ہے۔“
عقل بند لوگ نہاتے وقت شیمپو،تولیا اور صابن وغیرہ سب چیزیں باہر رکھ کر نہانے چلے جاتے ہیں اور پھر غسل خانے سے آوازیں دے دے کر منگواتے ہیں۔گرمی کے دنوں میں یہ گھر میں داخل ہوں تو سب سے پہلے پسینے سے بھری ہوئی قمیض اُتار کر گھومنے والے پنکھے پر ڈال دیتے ہیں۔

موٹر سائیکل چلا رہے ہوں اور اشارہ (سگنل) بند ہو جائے تو فوراً فٹ پاتھ پر موٹر سائیکل چڑھا کر یوٹرن لے لیتے ہیں۔
ان کے تعلقات کم از کم آئی جی تک ہوتے ہیں،تاہم وقت پڑنے پر کوئی کانسٹیبل بھی کام نہیں آتا۔یہ سنجیدہ ترین مباحث میں دلچسپی رکھتے ہیں،مثلاً بیوی نے آخر اپنے سارے زیورات کہاں چھپائے ہوں گے؟تایا رحمت کا بیٹا اتنی آسانی سے یونان کے راستے اٹلی کیسے پہنچ گیا؟ پھوپھی سرداراں نے گھر کا اوپر والا پورشن کن لوگوں کو کرائے پر دیا ہے۔اب آپ عقل بند لوگوں کو اپنے پاس دیکھیں گے تو ان نشانیوں کی مدد سے انھیں فوراً پہچان لیں گے۔

Your Thoughts and Comments