تحریک انصاف اپنی کارکردگی کی بنیاد پر 2018 کے عام انتخابات میں بھر پور کامیابی حاصل کرکے دوبارہ حکومت بنائے گی،پرویزخٹک

حکومت نے پانچ سال اپنے ایجنڈے کی تکمیل کیلئے مربوط اقدامات اُٹھائے ۔ تعلیم ، صحت ، پولیس اور دیگر شعبوں کو سیاسی مداخلت سے آزاد کرکے خدمات کی انجام دہی کیلئے پائوں پر کھڑا کیا،وزیراعلی خیبرپختونخوا

پیر اپریل 21:13

تحریک انصاف اپنی کارکردگی کی بنیاد پر 2018 کے عام انتخابات میں بھر پور ..
پشاور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 16 اپریل2018ء) وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا پرویز خٹک نے کہا ہے کہ پاکستان تحریک انصاف ٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍٍمقبول ترین سیاسی جماعت بن چکی ہے یہ واحد صوبائی حکومت ہے جس نے پانچ سال اپنے ایجنڈے کی تکمیل کیلئے دیر پا اقدامات کئے ہیں اور گزشتہ کئی دہائیوں سے سیاستدانوں کا پھیلایا ہوا گند صاف کرکے ایک شفاف اور قابل عمل سسٹم کی مضبوط بنیادیں رکھ دی ہیں۔

تحریک انصاف اپنی کارکردگی کی بنیاد پر 2018 کے عام انتخابات میں بھر پور کامیابی حاصل کرکے دوبارہ حکومت بنائے گی ۔

ان خیالات کا اظہار اُنہوںنے گزشتہ رات وزیراعلیٰ ہائوس پشاور میں مسلم لیگ (ن) کے موجودہ رکن صوبائی اسمبلی ارباب وسیم حیات کے اپنے ویلج چیئرمینز، ناظمین، کونسلرز، صدور، جنرل سیکرٹری سمیت تمام عہدیداروں ، اپنے خاندان اور سینکٹروں ساتھیوں جبکہ سابق ناظم فیاض خلیل کے بھائی نواز خلیل کے اپنے خاندان اور ساتھیوں سمیت پاکستان تحریک انصاف میں شمولیت کے موقع پر منعقدہ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔

سپیکر صوبائی اسمبلی اسد قیصر، صوبائی وزیر برائے اطلاعات شاہ فرمان، ایم پی اے زرگل خان، سینیٹر ایوب آفریدی اور نور عالم بھی تقریب میں موجود تھے۔ وزیراعلیٰ نے تحریک میں نئے شامل ہونے والوں کا خیر مقدم کیا اور تحریک انصاف کی قیادت پر اعتماد کے اظہار پر اُن کا شکریہ اداکیا ۔وزیراعلیٰ نے کہاکہ اس صوبے کی تاریخ گواہ ہے کہ حکومت کے آخری ایام میں برسر اقتدار پارٹی کے اپنے لوگ اُسے چھوڑ کر دوسری پارٹیوں کا رخ کرلیتے ہیں اور پارٹی اپنی مقبولیت کھو بیٹھتی ہے مگر اس کے برعکس پاکستان تحریک انصاف نے خیبرپختونخوا کی اس روایت کو یکسر بدل کر رکھ دیا ہے ۔

جوں جوں وقت گزرتا جاتا ہے تحریک انصاف کی مقبولیت بڑھتی جارہی ہے ۔آج نہ صرف صوبے کے طول و عرض بلکہ ملک بھر سے لوگ تحریک انصاف میں شامل ہورہے ہیںجو تحریک انصاف کی قوم دوست پالیسیوں اور صوبائی حکومت کی کارکردگی کا منہ بولتاثبوت ہے ۔ وزیراعلیٰ نے کہاکہ اُن کی حکومت نے پانچ سال اپنے ایجنڈے کی تکمیل کیلئے مربوط اقدامات اُٹھائے ۔ تعلیم ، صحت ، پولیس اور دیگر شعبوں کو سیاسی مداخلت سے آزاد کرکے خدمات کی انجام دہی کیلئے پائوں پر کھڑا کیا۔

وزیراعلیٰ نے کہاکہ انہوںنے اپنے اہداف کے مطابق خیبرپختونخوا میں تبدیلی کی ٹھوس بنیادیں رکھ دی ہیں ۔ پاکستان کو ترقیافتہ اقوام کی صف میں کھڑا کرنے کیلئے جدوجہد کی ضرورت ہے ۔ ہم بحیثیت قوم سمجھ لینا چاہیئے کہ ملکی ترقی اور خوشحالی کیلئے نظام کی تبدیلی واحد حل ہے ۔ دُنیا آگے جارہی ہے اور ہم پیچھے ، اس کی وجہ کرپٹ سسٹم ہے ۔ وزیراعلیٰ نے کہاکہ سمندر پار پاکستانی اپنے ملک سے شدید محبت رکھتے ہیں وہ پاکستان میں واپس آکر ملک کی ترقی و خوشحالی میں کردار ادا کرنا چاہتے ہیں۔

اگر ہم اپنے سسٹم کو ٹھیک کرلیں ایک پر اعتماد ماحول پیدا کریں تو پاکستان کو کسی بھی بیرونی مدد کی ضرورت نہیں۔ ہمارا اعلیٰ ترین دماغ اور سرمایہ جو باہر منتقل ہو چکا ہے واپس آسکتا ہے اور دُنیا کا بھی پاکستان پر اعتماد بحال ہو سکتا ہے ۔ وزیراعلیٰ نے واضح کیا کہ اُن کی حکومت نے خیبرپختونخوا میں اس کا عملی مظاہرہ کرکے دکھایا ہے ۔ اس موقع پر وزیراعلیٰ نے تحریک انصاف میں نئے شامل ہونے والوں کو پارٹی کی ٹوپیاں پہنائیںاور یقین دلایا کہ اُن کا فیصلہ صوبے کے لئے بہترین ثابت ہوگا۔ مستقبل پاکستان تحریک انصاف کا ہے ۔ تحریک انصاف نوجوانوں کی پارٹی ہے اسلئے اس کا مقابلہ مشکل ہی نہیں بلکہ ناممکن ہے ۔

Your Thoughts and Comments