نوکوٹ تھانہ کی حدود میں ڈاکہ زنی اور چوری کی واردات میں مسلسل اضافہ

پولیس تھانہ کے قریب سے نامعلوم چورگھر کے باہر کھڑی موٹر سائیکل لے اُڑے، شہری عدم تحفظ کا شکار

منگل اپریل 19:01

نوکوٹ(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 17 اپریل2018ء) نوکوٹ تھانہ کی حدود میں ڈاکہ زنی اور چوری کی واردات میں مسلسل اضافہ پولیس شہر میں جرائم کی روک تھام میں ناکام ہوگئی پولیس تھانہ کے قریب سے نامعلوم چورگھر کے باہر کھڑی موٹر سائیکل لے اُڑے شہری عدم تحفظ کا شکار تفصیلات کے مطابق نوکوٹ اور اس کے گردونواح میں گزشتہ دو ہفتوں کے دوران لوٹ مار اور چوری کی تین وارداتیں رونما ہوچکی ہیں اور نوکوٹ پولیس کے ایس ایچ او شہر میں جاری چوری کی وارداتوں کی روک تھام میں مسلسل ناکام دکھائی دے رہے ہیں اور منگل کے روز دن دیہاڑے پولیس تھانے سے متصل علاقے ڈھوروبازار میں عبدالحمید نوہڑی کے گھر کے باہر کھڑی نئی 2018ماڈل سی ڈی 70موٹرسائیکل نامعلوم چور لے کر فرار ہوگئے جبکہ موٹر سائیکل چوری ہونے کے فوراً بعد پولیس کو چوری کے تعاقب کے لئے اطلاع دی تو پولیس تھانہ میں ایس ایچ او دیگر افسران موجود نہیں تھے اور تھانہ میں صرف دو سپاہی موجود تھے شہریوں نے چوری کے خلاف بروقت کاروائی کا کہا گیا تو پولیس اہلکاروں نے کہا کہ ایس ایچ او اور ہیڈمحرر ڈگری کورٹ گئے ہیں جب آئیں گئے تو کاروائی کا عمل شروع کیا جائے گا واضح رہے کہ گزشتہ ہفتہ نوکوٹ کے گنجان علاقے میں ایک ہی رات میں نقب زنی کی واردات ہوئی تھی اور تاجروں کی جانب سے چوری کے خلاف کاروائی کے لئے اپنی اپنی رپورٹ بھی تھانہ میں درج کروارکھی ہے لیکن نوکوٹ پولیس کے ایس ایچ او نصراللہ ہالیپھوٹو چوری کو پکڑنے میں ناکام دکھائی دے رہے ہیں چند روز قبل نوکوٹ بیوپاری ایسوسی ایشن کے صدر آصف رضاقائم خانی نے تاجروں کے ہمراہ ایس ایچ او سے تھانہ میں ملاقات کے دوران شہر میں چوری کی وارداتوں کی بڑھتی ہوئی صورتحال پر عدم تحفظ کا اظہار کیا تھا اور ہونے والی چوری میں پولیس کی عدم پیش رفت پر احتجاج کیا گیا تھا جس پر ایس ایچ او نوکوٹ نے تاجروں کو یقینی دہانی کرواتے ہوئے کہا تھا کہ نوکوٹ میں چوری کی وارداتوں میں ملوث افراد کے خلاف کاروائی کی جائے گی اور ہم تفتیش کررہے ہیں اور ملزمان جلد پکڑیں جائیں گئے ۔

متعلقہ عنوان :