بھارت میں یوٹیوب پر ویڈیو نے 40 سال سے بچھڑے خاندان سے ملا دیا

کمدرم گھمبیر سنگھ 1978 میں منی پورریاست میں خاندان سے بچھڑ گئے تھے،ممبئی میں گانے گاکرپیسے کماتے،پولیس

جمعہ اپریل 12:21

ممبئی(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 20 اپریل2018ء) بھارت میں ایک شخص کی یوٹیوب پر وائرل ہونے والی ویڈیو نے اس کو 40 برس بعد اپنے بچھڑے ہوئے خاندان سے ملا دیا۔۔بھارتی ٹی وی کے مطابق40 برس سے لاپتہ کمدرم گھمبیر سنگھ کی ممبئی میں گاتے ہوئے لوگوں سے پیسے مانگنے کی ویڈیو یوٹیوب پر وائرل ہوئی اور اس ویڈیو کی مدد سے ان کے بھائی نے انھیں پہچان لیا۔کمدرم گھمبیر سنگھ 1978 میں 26 برس کی عمر میں منی پور ریاست میں اپنے خاندان سے بچھڑ گئے تھے۔

پولیس نے 66 سالہ کمدرم گھمبیر سنگھ کو تلاش کر کے ان کے خاندان سے ملوا دیا اوریوں وہ منی پور واپس اپنے خاندان کے پاس چلے گئے ۔کمدرم گھمبیر سنگھ کے بھائی کمدرم کالوچندر نے بتایا کہ مجھے اپنی آنکھوں پر یقین نہیں آ رہا تھا جب مجھے میرے ایک بھانجے نے ویڈیو دکھائی۔

(جاری ہے)

وہ ان کو دوبارہ دیکھنے کی تمام امیدیں کھو چکے تھے۔کمدرم گھمبیر سنگھ کے خاندان کو ویڈیو دیکھنے پر اندازہ ہوا کہ وہ ممبئی میں ہی ہو سکتے ہیں کیونکہ اس ویڈیو کو اکتوبر میں یوٹیوب پر جاری کرنے والے فیروز شکری ممبئی میں ہی رہائش پذیر ہیں۔

انسپیکٹر پنڈت ٹھاکرے نے بتایا کہ وہ ہمیں ایک ریلوے سٹیشن کے باہر سے ملے اور اس وقت ان کی حالت بہت بری تھی اور طبعیت بھی ٹھیک نہیں تھی۔انسپیکٹر پنڈت ٹھاکرے کے مطابق کمدرم گھمبیر سنگھ نے انھیں بتایا کہ وہ انڈین فوج کے ایک سابق اہلکار ہیں اور انھوں نے 1978 میں شادی کے فوری بعد اپنا گھر چھوڑ دیا تھا کیونکہ وہ خوش نہیں تھے۔ اس وقت سے وہ ممبئی میں ہی ہیں اور وہ بھیک مانگ کر یا یومیہ اجرت پر محنت مزدوری کر کے اپنا گزارہ کرتے رہے۔انسپیکٹر پنڈت ٹھارے کے مطابق گھمبیر سنگھ کی تصویر منی پور کی پولیس کو بھیجی گئی جس کے بعد ان کی فون پر اپنے چھوٹے بھائی سے ٹیلی فون پر بات کرائی گئی۔۔ممبئی پولیس نے گھمبیر سنگھ کی اپنے خاندان سے ملاپ کی تصویر بھی ٹوئٹر پر شیئر کی ہے۔