اکشے کمار وردی نیلام کرنے پر قانونی شکنجے میں پھنس گئے

عدالت نے وردی نیلام کرنے پر قانونی نوٹس جاری کردیا گیا

جمعرات مئی 12:17

اکشے کمار وردی نیلام کرنے پر قانونی شکنجے میں پھنس گئے
ممبئی(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 10 مئی2018ء) بالی ووڈ ایکشن ہیرو اکشے کمار اور ان کی اہلیہ ٹوئنکل کھنہ کو فلم ’رستم‘ میں استعمال کی گئی وردی نیلام کرنے پر قانونی نوٹس جاری کردیا گیا۔بالی ووڈ کے ایکشن ہیرو اکشے کمار نے کچھ روز قبل فلم ’رستم‘ میں استعمال کی گئی بھارتی بحریہ کی اصلی وردی کی نیلامی کا اعلان کیا تھا تاکہ نیلامی سے حاصل ہونے والی آمدنی کو جانوروں کے تحفظ اور فلاحی کاموں کے لیے استعمال کیا جاسکے تاہم اکشے اور ان کی اہلیہ ٹوئنکل کھنہ کو وردی کی نیلامی کے اعلان پر شدید تنقید کا سامنا کرنا پڑا اور اب دونوں کو قانونی نوٹس بھی جاری کردیا گیا۔

بھارتی میڈیا رپورٹس کے مطابق اکشے کمار اور ٹوئنکل کھنہ کی جانب سے وردی کی نیلامی کو روکنے کے لئے عدالت نے نیلام گھر سالٹ اسکائوٹ کو نوٹس جاری کر دیا۔

(جاری ہے)

نوٹس میں بتایا گیا کہ اس وردی اور میڈل کو نیلامی کے لئے پیش نہیں کیا جا سکتا کیوں کہ وردی صدر کی طرف سے کمیشن افیسر کو اعزاز کے طور پر عطا کی جاتی ہے۔رپورٹس کے مطابق جاری کردہ نوٹس میں دونوں اداکاروں کو بھی تنبیح کی گئی، اور خبردار کیا کہ اگر اکشے کمار اور ٹوئنکل کھنہ کی جانب سے نیلامی کی منسوخی کو ناکام بنانے کی کوشش کی گئی تو ان کے خلاف بھارتی پینل کوڈ کے تحت کارروائی عمل میں لائی جائے گی۔

دوسری جانب لیفٹیننٹ کرنل سندیپ اہلاوت اور ساتھی افسران کی طرف سے بھی عوامی مفاد کے تحت وردی کی پاسداری کو برقرار رکھنے کے لئے دونوں اداکاروں کے خلاف ممبئی کی عدالت میں درخواست دائر کردی گئی ہے۔واضح رہے تینو سریش دیسائی کی ہدایت کاری میں 2016 میں ریلیزہوئی فلم ’رستم‘ میں اکشے کمار کے مدمقابل الینا ڈی کروز نے مرکزی کردار ادا کیا تھا جب کہ فلم میں بہترین اداکاری پر اکشے کمار کو نیشنل ایوارڈ سے بھی نوازا گیا تھا۔

متعلقہ عنوان :