با اثر شخص کی چار ساتھیوں سمیت اپنی سابقہ بیوی کے ساتھ اجتماعی زیادتی

پولیس بے سہارا خاتون کو انصاف دینے کی بجائے ملزمان کو تحفظ دینے میں مصروف

Muqadas Farooq مقدس فاروق اعوان جمعرات مئی 12:52

با اثر شخص کی چار ساتھیوں سمیت اپنی سابقہ بیوی کے ساتھ اجتماعی زیادتی
قصور (اردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔10مئی 2018) درندہ صفت شخص نے حوا کی بیٹی پر ظلم کرنے کی انتہا کر دی۔قصور سے تعلق رکھنے والے سفاک شخص نے اپنی سابقہ بیوی کو ساتھیوں کے ساتھ اجتماعی زیادتی کا نشانہ بنا ڈالا۔۔پولیس خاتون کو انصاف دینے کی بجائے ملزمان کو تحفظ فراہم کر رہی ہے۔قومی اخبار کی ایک رپورٹ کے مطابق قصور کے نواحی علاقہ جمیر کلاں میں جنسی وحشت کے شکار نما انسان نے حواء کی بیٹی پر ظلم کے پہاڑ توڑنے کی انتہا کر دی۔

قصور پولیس بے قصور اور بے سہارا خاتون کو انصاف دینے کی بجائے خاتون کے ساتھ زیادتی کرنے والے ملزمان کو تحفظ فراہم کرنے میں لگی ہوئی ہے۔۔پولیس نے درخواست وصول کرنے اور ملزمان کے خلاف کسی بھی طرح کی صفائی کرنے سے صاف انکار کر دیا ہے۔رپورٹ کے مطابق اشرف نامی شخص نے خاتون سے ڈیڑھ سال قبل شای کی تھی۔

(جاری ہے)

شادی کے بعد دونوں کے ہاں ایک بھی کی ولادت ہوئی۔

جب کہ اشرف بیٹے کا خواہش مند تھا،بیٹی کے پیدا ہونے پر اشرف نامی شخص غصے سے آگ بگولا ہو گیا۔اور اس نے اپنی بیوی کو بد ترین تشدد کا نشانہ بنانا شروع کر دیا۔اوراسی دوران ایک دن طیش میں آنے کے بعد اشرف نے اپنی بیوی کو طلاق دے دی۔رپورٹ کے مطابق اشرف کا تعلق ایک سیاسی پارٹی سے ہے۔اور ایک روز اشرف نے اپنے ساتھیوں کے ہمراہ خاتون کے گھر پہر دھاوا بول دیا۔

اور نہ صرف اپنی سابقہ بیوی کو زیادتی کا نشانہ بنایا بلکہ اشرف کے چار ساتھیوں نے بھی خاتون کے ساتھ زیادتی کی۔اس واقعے کے بعد اشرف اور اس کے ساتھیوں نے یہ وطیرہ بنا لیا اور نشے میں دھت خاتون کے گھر پر پہنچ جاتے۔اور خاتون کے جسم کے مختلف حصوں کو سگریٹ سے زخمی بھی کرتے۔جب اس تمام واقعے کا علم علاقے کے لوگوں کو ہوا تو انہوں نے پولیس کو آگاہ کیا تا ہم پولیس نے فرضہ کاروائی کرتے ہوئے۔مقدمہ درج کیا لیکن کسی ملزم کو گرفتار نہ کیا۔اشرف نے خاتون کو دھمکی دی کہ وہ یہ مقدمہ واپس لے ورنہ دوسری صورت میں وہ اس کی بیٹی کو اغوا کر لیں گے۔جس کے بعد خاتون کو مقدمہ واپس لینا پڑا۔