نوشہرہ، پکنک پر آئے دوستوں کا رکشہ بے قابو ہوکر دریائے کابل میں الٹ گیا،ایک نوجوان جاں بحق

جمعہ مئی 23:05

نوشہرہ کینٹ(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 11 مئی2018ء) نوشہرہ دریائے کابل کے زیرتعمیر بند پر پکنک منانے کے لیے آنے والے دوستوں کا رکشہ بے قابو ہوکر دریائے کابل میں الٹ گیا ۔۔پولیس کے مطابق حادثہ میں ایک سولہ سالہ نوجوان ڈوب کرجاں بحق ہوگیا جبکہ چار دوست شدید زخمی ہوگئے رکشہ مکمل طور پر تباہ ہوگیا۔لوگوں نے آپنی مدد آپ کے تحت جابحق اور زخمیو ں کو دریائے کابل اور کھائی سے نکال کر ڈسٹرکٹ ہیڈکواٹرہسپتال نوشہرہ منتقل کیا۔

حادثہ کی اطلاع ملتے ہی لوگوں کی بڑی تعداد ڈسٹرکٹ ہیڈکواٹرہسپتال نوشہرہ پہنچ گی۔

(جاری ہے)

پولیس کے مطابق جابحق نوجوان فاروق کی نعیش ورثا بغیر پوسٹ مارٹم ہسپتال سے لے گئے۔رپورٹ درج نہ کرنے پر پولیس تھانہ نوشہرہ کلاں نے رپورٹ درج نہیں کی۔تفصیلا ت کے مطابق کرکٹ کے مقامی ٹیم کے پانچ کھلاڑی دوست نوشہرہ کلاں کے علاقے شاہ لاخیل سے پکنک منانے دریائے کابل کے کنارے رکشہ میں جارہے تھے کہ اچانک زیرتعمیر بند سے رکشہ الٹ کر دریائے کابل کی کھائی میں جاگر جس کے نتیجہ میں سولہ سالہ نوجوان مسمی فاروق ولد شاہی ملک موقعہ پرجابحق ہوگیا جبکہ شیراز گل ولد غازی گل،بلال ولد راج ولی،فواد ولد جمروز اور عطا ،ْ اللہ ولد افضل خان شدید زخمی ہوگئے۔