بعض سکول پی ایس آر اے ایکٹ کی خلاف ورزی کررہے ہیں، تفصیلی ریکارڈ کا جائزہ لینے کے بعد انکی رجسٹریشن معطل کی جائیگی ، پرائیوٹ سکولز اپناقبلہ درست کرلیں بصورت دیگر سخت کارروائی کیلئے تیارر ہیں سید ظفرعلی شاہ

جمعہ مئی 21:51

پشاور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 18 مئی2018ء) منیجنگ ڈائریکٹر پی ایس آر اے سید ظفرعلی شاہ نے افسوس کا اظہارکرتے ہوئے کہاہے کہ بعض سکول پشاور ہائی کورٹ اور پی ایس آر اے ایکٹ کی کھلم کھلا خلاف ورزی کر ر ہے ہیں جن کیخلاف قانونی کاروائی کے بعد انکی رجسٹریشن معطل کرکے ان سکولوں کاانتظام پی ایس آر اے اپنے ذمہ لیے گی ۔پرائیوٹ سکولز ریگولیٹری اتھارٹی کوجمعہ کے روز والدین کی جانب سے شکایا ت موصول ہوئی جس میں والدین نے کہاکہ پشاور ماڈل سکول ورسک روڈ پشاور ہائی کورٹ کے احکامات اور پی ایس آر اے ایکٹ کی کھلم کھلاخلاف ورزی کرتے ہوئے والدین سے اضافی فیسیں وصول کررہی ہیں جس پر منیجنگ ڈائریکٹر پی ایس آر اے سید ظفر علی شاہ نے اسسٹنٹ ڈائریکٹر پی ایس آر اے شہباز خٹک کے ذریعے سکول کو اپنی پوزیشن واضح کرنے کیلئے نوٹس ارسال کیا تاہم سکول انتظامیہ نے ہٹ دھری کا مظاہرہ کرتے ہوئے نوٹس لینے سے انکار کردیا جس کے بعد مینجنگ ڈائریکٹر پی ایس آر اے سید ظفر علی شاہ نے ڈائریکٹر آپریشن یاسر حسین کی سربراہی میں پانچ رکنی کمیٹی تشکیل دی جو کہ بروز ہفتہ سکول کے مکمل ریکارڈ کا جائزہ لینے کے بعد ایم ڈی کو مزید کارروائی کیلئے رپورٹ پیش کرے گی اور خلاف ورزی کرنے والے سکولوں کی رجسٹریشن معطل کرکے ان کا انتظام پی ایس آر اے اپنے ذمہ لیں گی۔

(جاری ہے)

انہوں نے ایک مرتبہ پھر تنبیہ کی کہ خلاف ورزی کرنیوالے پرائیوٹ سکولز اپنا قبلہ درست کرلیں بصورت دیگر سخت کارروائی کیلئے تیارر ہیں ۔

متعلقہ عنوان :