دی جنگل بک ناول پر بننے والی ایک اور فلم’’موگلی‘‘ کا پہلا ٹریلر ریلیز

فلم رواں سال 19 اکتوبر کو سینما گھروں کی زینت بنے گی

بدھ مئی 11:50

نیویارک (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 23 مئی2018ء) دی جنگل بک ناول پر بننے والی ایک اور فلم 'موگلی' کا پہلا ٹریلر ریلیز کردیا گیا ہے۔اداکار اور فلم ساز اینڈیSerkis نے وعدہ کیا ہے کہ یہ فلم اس بچے موگلی کی زندگی کے تاریک پہلوئوں کو بیان کرے گی، جس کی پرورش جنگل میں میں بھیڑوں نے کی۔اس بچے کی جنگ غضیلے شیر خان اور ایسے انسانوں سے ہوتی ہے جو اسے معاشرے میں قبول کرنے کے لیے تیار نہیں ہوتے۔

روہن چند نامی بچے نے موگلی کا مرکزی کردار ادا کیا ہے جبکہ دیگر کاسٹ میں کرسٹین بیل نے بگھیرا (سیاہ تیندوی) کو اپنی آواز دی ہے، بینڈیکٹ Cumberbatch کی آواز شیر خان کے لیے استعمال ہوئی ہے جبکہ کیٹ Blanchett نے کا (اڑدھا) کو آواز دی۔اینڈی Serkis نے خود بالو کے کردار کو آواز دی جو کہ موگلی کا دوست ہوتا ہے۔

(جاری ہے)

ایک انٹرویو کے دوران وارنر برادرز کے لیے بنائی جانے والی اس فلم کے بارے میں اینڈیSerkis نے کہا ہماری فلم ذرا بڑی عمر کے ناظرین کے لیے ہے۔

ان کا کہنا تھا یہ 13 سال یا اس سے زائد عمر کے ناظرین کے لیے موزوں ہے، کیونکہ اس کی کہانی ذرا تاریک اور Kipling Rudyard کی اصل کہانی سے کافی قریب ہے، یہ ایک باہر والے کی کہانی ہے، ایک ایسا فرد جو ایک مخصوص طرز زندگی کے قوانین اور رواج وغیرہ کو قبول کرنے کی کوشش کرتا ہے، اور پھر اسے ایک ثقافت یعنی انسانی ثقافت کو اپنانا پڑتا ہے، جو کہ یقیناً اپنا سکتا ہے کیونکہ وہ خود انسان ہے، تو یہ 2 مختلف مخلوقات، ان کے قوانین اور روایات کی داستان ہے۔یہ فلم 19 اکتوبر 2018 کو ریلیز کی جائے گی۔خیال رہے کہ اس سے پہلے ڈزنی اسٹوڈیوز نے بھی 2016 اسی ناول پر ایک فلم بنائی تھی جو کہ سپرہٹ ثابت ہوئی تھی۔

متعلقہ عنوان :