ریحام خان عید کے بعد عمران خان پر ایک اور بم گرانے کو تیار

ریحام خان عید کے بعد بلیک بیری لیکس آئیں گی،جس میں فون کی پانچ کاپیاں موجود ہوں گی اور غیر اخلاقی پیغامات ہوں گے، معروف صحافی کا دعوی

Muqadas Farooq مقدس فاروق اعوان بدھ جون 11:32

ریحام خان عید کے بعد عمران خان پر  ایک اور بم گرانے کو تیار
لاہور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 13 جون2018ء) پاکستان تحریک انصاف کے چئیرمین عمران خان کی اہلیہ ریحام خان کی کتاب کو شور مچا ہوا ہے اور اشاعت سے قبل ہی ریحام خان کی کتاب کی مشہوری ہو گئی ہے۔۔ریحام خان کا کہنا ہے کہ میری اس کتاب میں ایک بلیک بیری کا ذکر ہے جس کی وجہ سے تحریک انصاف گھبراہٹ کا شکار ہے۔اسی متعلق گفتگو کرتے ہوئے ایک صحافی صابر شاہ کا کہنا تھا کہ میری اطلاعات کے مطابق ریحام خان عید کے بعد بلیک بیری لیکس لانے کو تیار ہیں۔

جس میں مجھے بتایا گیا ہے کہ ٹیلی فون کی پانچ سے چھ کاپیاں لا رہی ہیں۔اور بقول ریحام خان اس میں غیر اخلاقی پیغامات ہیں۔اور ریحام خان کہیں گی کہ بے شک ان پیغامات کا فرانزک کروالیا جائے۔صابر شاہ کا مزید کہنا تھا کہ سابق چیف جسٹس افتخار چوہدری نے تو عمران خان پر مقدمہ درج کروایا تھا لیکن اب میری خیال سے ریحام خان بھی عمران خان کو آرٹیکل 62 اور 63کے تحت نا اہل کروانے کے لیے میدان میں آئیں گی۔

(جاری ہے)

اور اب ریحام خان بہت پر امید بیٹھی ہوئی ہیں۔یاد رہے کہ عمران خان کی دوسری سابقہ اہلیہ ریحام خان کی کتاب لانچ ہونے سے قبل ہی متنازعہ ہو چکی ہے۔۔۔ریحام خان نے اپنی کتاب میں تحریک انصاف کے چئیرمین عمران خان،،،ان کے اہل خانہ اورعمران خان کے قریبی دوستوں سے متعلق بھی کچھ ایسی باتیں لکھی ہیں۔جس نے ریحام خان کی کتاب کو متنازعہ بنا دیا۔

ریحام خان کی کتاب میں سب سے اہم بات جس نے سب کی توجہ اپنی طرف مرکوز کی ہو ئی ہے۔وہ عمران خان کا "بلیک بیری ‘ ہے۔میڈیا پر یہ خبریں گردش کرتی رہی ہیں کہ ریحام خان جب طلاق ہونے سے قبل لاہور سے لندن گئی تھیں تو وہ عمرا ن خان کی بلیک بیری ڈیوائس اپنے ساتھ لے آئی تھیں۔کہا جا رہا ہے کہ عمران خان کے بلیک بیری میں بہت ساری ایسی چیزیں ہیں جو ریحام خان منظر عام پر لے آئیں تو پاکستان تحریک انصاف اور اس کے چئیرمین عمران خان کو بہت نقصان ہو گا۔ اس متعلق ایک صحافی نے دعوی کیا ہے کہ عمران خان کا بلیک بیری ابھی بھی برطانیہ میں موجود ہے اور یہ بلیک بیری ریحام خان نے اپنی کسی دوست کے پاس یا انشورنس کمپنی کے پاس رکھا ہوا ہے۔