حمزہ شہباز پر ڈھائی کروڑ روپے لے کر ق لیگ کے رہنما کو ٹکٹ دینے کا الزام

حمزہ شہباز شریف نے ق لیگ کے رہنما اور پرویز مشرف کے ساتھی ڈاکٹر لیاقت کو مبینہ طور پر 2.5 کروڑ روپے لے کر ٹکٹ دیا ہے، ن لیگی رہنما حامد حمید کا الزام

Muqadas Farooq مقدس فاروق اعوان اتوار جون 16:16

حمزہ شہباز پر ڈھائی کروڑ روپے لے کر ق لیگ کے رہنما کو ٹکٹ دینے کا الزام
لاہور(اُردوپوائنٹ اخبارتازہ ترین۔24 جون 2018ء) ::پاکستان مسلم لیگ ن کے رہنما حامد حمید نے حمزہ شہباز شریف  پر بڑا الزام عائد کر دیا۔میڈیا رپورٹس کے مطابق پاکستان مسلم لیگ ن کے سابق رکن اسمبلی اور پارلیمانی سیکرٹری امور گلگت بلتستان حامد حمید نے پارٹی فیصلے کے خلاف بغاوت کر دی۔ن لیگی رہنما نے حمزہ شہباز شریف پر بھی بڑا الزام عائد کر دیا اور کہا کہ حمزہ شہباز شریف نے ق لیگ کے رہنما ڈاکٹر لیاقت کو مبینہ طور پر 2.5 کروڑ روپے لے کر ٹکٹ دیا ہے۔

حامد حمید کا کہنا ہے کہ حمزہ شہباز شریف نے 2.5کروڑ روپے لے کر پرویز مشرف کے ساتھی کو ٹکٹ دیا،ان کا کہنا تھا کہ ورکرز چندہ اکھٹا کریں گے اور پھر حمزہ شہباز سے این اے 90 کا ٹکٹ لے کر رہیں گے۔یاد رہے اس سے پہلے پاکستان مسلم لیگ ن کے سینئیر رہنما زعیم قادری بھی حمزہ شہباز پر پیسے لے کر ٹکٹ دینے کا الزم عائد کر چکے ہیں۔

(جاری ہے)

زعیم قادری کا پریس کانفرس سے خطاب کرتے ہوئے کہنا تھا کہ میں حمزہ شہبازشریف کے بوٹ پالش نہیں کرسکتا۔

میں سید ہوں۔اولاد امام حسین ہوں۔جان دے سکتا ہوں عزت نہیں دوں گا۔۔۔لاہور تمہاری اور تمہارے باپ کی جاگیرنہیں ہے۔تمہیں سیاست کرکے دکھاؤں گا۔انہوں نے کہاکہ میں تمہاری نوکری نہیں کروں گا۔میں نوکری عوام کی کروں گا۔تم اپنے لاڈلوں ،بوٹ پالشیوں اور مالشیوں کولاؤ۔ میرا الیکشن تمہارے ساتھ ہے۔انہوں نے کہا کہ ٹکٹ کی بات نہیں ہے۔بس آج میرے صبر کا پیمانہ لبریز ہوا ہے۔انہوں نے کہا کہ لوگ جانتے ہیں کہ آپ دس سالوں میں کسی سے بھی نہیں ملے تھے۔میں پنجاب کے ورکرزکے پاس جاؤں گا۔اور آپ کیخلاف جنگ لڑوں گا۔میں پچھلے دس سالوں میں میرا کیا حال تھا یہ بھی بتادوں گا۔انہوں نے کہا کہ آزاد حیثیت میں الیکشن لڑنے کا اعلا ن کرتا ہوں۔