جو پروپیگنڈہ کررہے ہیں وہ کرتے رہیں، نوازشریف

خبر پرجو پروپیگنڈہ کررہے ہیں، وہ جانیں ان کا کام جانے۔ سابق وزیراعظم نواز شریف کا برطانوی اخبارکی خبر پرردعمل

sanaullah nagra ثنااللہ ناگرہ اتوار جون 21:24

جو پروپیگنڈہ کررہے ہیں وہ کرتے رہیں، نوازشریف
لندن (اُردوپوائنٹ اخبارتازہ ترین۔24 جون 2018ء) : پاکستان مسلم لیگ ن کے قائد محمد نواز شریف نے کہا ہے کہ جو پروپیگنڈہ کررہے ہیں وہ کرتے رہیں،انہوں نے برطانوی خبرسے متعلق سوال پرجواب میں کہا کہ جو پروپیگنڈہ کررہے ہیں، وہ جانیں ان کا کام جانے۔ انہوں نے لندن ہارلے اسٹریٹ میں اپنی اہلیہ بیگم کلثوم نواز کی عیادت کے موقع پرمیڈیا سے مختصر گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ بیگم کلثوم نواز کو انفیکشن ہو گیا ہے۔

کلثوم نواز کو انفیکشن کے باعث بخار بھی ہے۔ انہوں نے واضح کیا کہ کلثوم کی بیماری کے باعث فی الحال الیکشن مہم میں حصہ لینا ممکن نہیں۔ انہوں نے کہا کہ کلثوم میری بیوی ہیں۔ کچھ میرے بھی فرائض ہیں اورادا بھی کر رہا ہوں۔ نوازشریف نے برطانوی خبرسے متعلق سوال پرجواب دیا کہ جو پروپیگنڈہ کررہے ہیں وہ کرتے رہیں۔

(جاری ہے)

جو پروپیگنڈہ کررہے ہیں، وہ جانیں ان کا کام جانے۔

واضح رہے برطانوی اخبار کی رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ لندن میں موجود 4 فلیٹس شریف خاندان کی ملکیت میں ہیں۔ سابق وزیراعظم نواز شریف1993ء سے جب بھی وہ لندن آتے ہیں تو انہیں فلیٹوں میں قیام کرتے ہیں جن کی مالیت کم از کم 7 ملین پاؤنڈ ہے۔ رپورٹ میں شریف خاندان کی فلیٹوں کی تصاویر بھی جاری کی گئی ہیں اور ساتھ میں ان کی مالیت بھی بتائی گئی ہے۔

شریف خاندان نے لندن کے مہنگے ترین علاقوں میں محلات بنا رکھے ہیں۔برطانوی اخبار کی رپورٹ کے مطابق پاکستانی وزیر اعظم نے چار پرتعیش ترین اپارٹمنٹس پر مشتمل محل تعمیر کیا۔ دوسری جانب سابق وزیراعظم نواز شریف کی صاحبزادی مریم نواز کا کہنا ہے کہ مریم نواز نے اپنی والدہ کی عیادت کے موقع پرمیڈیا کو بتایا کہ ابھی والدہ ہوش میں نہیں ہیں۔

مریم نواز نے کہا کہ میں نے امی کو آواز دی تو انہوں نے کچھ ردعمل کا اظہار کیا، مجھے لگتا ہے والدہ ہماری باتیں سن رہی ہیں۔۔مریم نواز نے کہا کہ وینٹی لیشن کم کرنے پر والدہ ردعمل ظاہر کرتی ہیں اور پھر کچھ نہ کچھ ایسا ہوجاتا ہے کہ وینٹی لیشن کا لیول بڑھانا پڑتا ہے۔۔مریم نواز کے مطابق ایک دو مرتبہ ایسا ہوا ہے کہ انہوں نے والدہ کو آواز دی تو انہوں نے کچھ حرکت کی تاہم ڈاکٹروں سے جب ان کی طبیعت کے بارے میں پوچھا جاتا ہے تو وہ واضح جواب نہیں دیتے۔

یاد رہے کہ کینسر کے مرض میں مبتلا بیگم کلثوم نواز لندن کے ہارلے اسٹریٹ کلینک میں گزشتہ کئی ماہ سے زیرعلاج ہیں۔ ہارلے اسٹریٹ کلینک کے باہر سابق وزیراعظم نواز شریف کے صاحبزادے حسین نواز نے بھی میڈیا سے گفتگو کی۔۔حسین نواز کا کہنا تھا کہ ڈاکٹر والدہ کے علاج کے لیے ہر ممکن کوششیں کر رہے ہیں، باقی سب اللہ کے ہاتھ میں ہے۔