قومی احتساب بیورو نے اکائونٹنٹ جنرل گلگت بلتستان کے ڈپٹی اکائونٹنٹ جنرل اور اکائونٹ آفیسر کو گرفتار کر لیا

بدھ جون 12:52

قومی احتساب بیورو نے اکائونٹنٹ جنرل گلگت بلتستان کے ڈپٹی اکائونٹنٹ ..
گلگت۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 27 جون2018ء) قومی احتساب بیورو نے قومی خزانے کو نقصان پہنچانے اور غبن کے الزام میں اکائونٹنٹ جنرل گلگت بلتستان کے ڈپٹی اکائونٹنٹ جنرل اور اکائونٹ آفیسر کو گرفتار کر لیا ہے۔ نیب نے اے جی پی آر کے سابق ڈسٹرکٹ اکائونٹس آفیسر چلاس و موجودہ ڈپٹی اکائونٹنٹ جنرل ندیم احمد اور اکائونٹنٹ جنرل گلگت بلتستان کے اکائونٹ آفیسر ریاض احمد کو گرفتار کر لیا ہے۔

(جاری ہے)

نیب سے جاری ہونے والے بیان کے مطابق گرفتار کئے جانے والے ملزمان پر الزام ہے کہ انہوں نے محکمہ زراعت گلگت بلتستان کے آفیسران کے ساتھ ملی بھگت کر کے 2012 ء سے 2015 ء تک سرکاری فنڈز میں غبن کیا۔نیب حکام کے مطابق اکائونٹنٹ جنرل گلگت بلتستان کے دونوں ڈی اے اوز نے اپنے اختیارات کا ناجائز استعمال کرتے ہوئے محکمہ زراعت ضلع دیامر کے آفیسرز سے ملی بھگت کی ہے جس کی وجہ سے قومی خزانے کو 2 کروڑ 48لاکھ روپے کا نقصان پہنچا۔

نیب حکام نے دونوںملزمان ندیم احمد اور ریاض احمد کو نیب کورٹ میں پیش کیا ہے نیب کورٹ نے دونوں ملزمان کے جسمانی ریمانڈ کی منظوری دے دی ہے۔ واضح رہے کہ نیب نے سرکاری خزانے کو نقصان پہنچانے کے جرم میں محکمہ زراعت ضلع دیامر کے تین آفیسروں کوپہلے ہی گرفتار کیا جا چکا ہے۔

متعلقہ عنوان :