لاہور میں تحریک انصاف کے رہنما ظہیر ناگرہ بھی قبضہ گروپوں کا حصہ نکلے

لاہور ڈویلپمنٹ اتھارٹی نے چوہدری ظہیر ناگرہ سے ایک ارب روپے مالیت کی زمین واگزار کروالی

Syed Fakhir Abbas سید فاخر عباس منگل دسمبر 18:40

لاہور میں تحریک انصاف کے رہنما ظہیر ناگرہ بھی قبضہ گروپوں کا حصہ نکلے
لاہور(اردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار-11 دسمبر 2018ء ) :لاہور ڈویلپمنٹ اتھارٹی نے قبضہ گروپوں کے خلاف کاروائی کرتے ہوئے چوہدری ظہیر ناگرہ سے 1 ارب روپے مالیت کی زمین واگزار کروالی۔اراضی کا رقبہ 30 کنال ہے۔تفصیلات کے مطابق پنجاب حکومت نے 2 اکتوبر سے پنجاب بھر میں تجاوزات کے خلاف آپریشن کررکھا ہے ۔اس آپریشن کے نتیجے میں ہزاروں کنال قیمتی اراضی کو واگزار کروا لیا گیا ہے۔

اس حوالے سے تازہ ترین خبر یہ ہے کہ لاہور ڈویلپمنٹ اتھارٹی ابھی بھی قبضہ گروپوں کے خلاف کاروائیاں جاری رکھے ہوئے ہے۔آج لاہور ڈویلپمنٹ اتھارٹی نے اس سلسلے میں لاہور کے علاقے سبزہ زار میں کاروائی کی۔کاروائی کے دوران اربوں کی زمین واگزار کروا لی گئی۔ایل ڈی اے کی اسٹیٹ برانچ نے سبزہ زار اسکیم کے سی بلاک میں کاروائی کی ہے۔

(جاری ہے)

کاروائی کرتے ہوئے 1 ارب روپے کی اراضی واگزار کروا لی گئی ہے۔

اراضی کا رقبہ 30 کنال تھا۔اس حوالے سے ایل ڈی اے ذرائع کا کہنا تھا کہ لاہور ڈویلپمنٹ اتھارٹی کے عملے نے ڈائریکٹر جنرل ایل ڈی اے آمنہ عمران خان کی زیر نگرانی جھگیاں ناگرہ کے علاقے میں آپریشن کر کے سبزہ زار سکیم کی ایک ارب روپے مالیت کی30کنال سے زائد اراضی خطرناک اور با اثر افراد کے ناجائز قبضے سے واگزار کروالی۔ سبزہ زار سکیم کے بلاک سی میں شامل 30کنال سے زیادہ اراضی پر بااثر لوگوں نے قبضہ کر کے غیر قانونی طور پرحویلی ‘ مکانات اور دکانیں تعمیر کر رکھی تھیں۔

ِسکیم پلان کے تحت یہاں 30سے زیادہ رہائشی پلاٹ بنائے گئے تھے۔ آپریشن کے دوران ضلعی انتظامیہ اور پولیس کی بھاری نفری بھی ایل ڈی اے کے عملے کے ہمراہ تھی۔آپریشن سے پہلے بعض مقامی افراد کو 16ایم پی او کے تحت گرفتار کرنے کے لئے ڈپٹی کمشنر لاہور نے احکامات بھی جاری کئے تھے۔ایل ڈی اے کے عملے نے آپریشن کے نتیجے میں 75فیصد سے زیادہ رقبے کا قبضہ واگزارکروا لیا جبکہ باقی جگہ حکم امتناعی کے باعث خالی نہ کروائی جا سکی ۔

ڈائریکٹر جنرل ایل ڈی اے آمنہ عمران خان نے کہاہے کہ قبضہ مافیا کے خلاف پنجاب حکومت کی پالیسی زیر و ٹالرنس ہے۔قبضہ مافیا سے سرکاری اراضی واگزار کروانا حکومت کی اولین ترجیح ہے ‘قبضہ گروپوں کے خلاف آپریشن کر کے حکومتی رٹ بحال کی جارہی ہے۔آپریشن بلا امتیاز کیا جارہا ہے اور کسی بھی قسم کی رعایت نہیں دی جائے گی۔ڈائریکٹر اسٹیٹ مینجمنٹ ٹو عثمان غنی نے ذاتی طور پر آپریشن کی قیادت کی ۔